محکمہ مواصلات و تعمیرات میں مالی بے ضابطگیوں پر 142 اہلکاروں کو سزائیں دی گئیں

محکمہ مواصلات و تعمیرات میں مالی بے ضابطگیوں پر 142 اہلکاروں کو سزائیں دی گئیں

  

بہاولپور (بیورورپورٹ )صوبائی پارلیمانی سیکرٹری برائے محکمہ تعمیرات ومواصلات نعیم صفدر انصاری نے کہاہے کہ محکمہ مواصلات وتعمیرات میں گزشتہ تین سال کے دوران مالی بے ضابطگیوں کے الزام میں پیڈاایکٹ کے تحت 247افسران کے خلاف تادیبی کاروائی کی گئی جبکہ الزام ثابت ہوجانے پر ایک 142اہلکاروں کو سزائیں دی گئیں۔وہ پنجاب اسمبلی میں اپنے محکمہ کے حوالے سے وقفہ(بقیہ نمبر8صفحہ12پر )

سوالا ت کے دوران ڈاکٹر سید وسیم اخترکاجواب دے رہے تھے۔انہوں نے مزیدبتایا کہ لاہور میں کل تین فلائی اوور اور گیارہ انڈرپاسز آپریشنل ہیں جس پر ڈاکٹر سید وسیم اختر نے کہا کہ بہاولپورکے شہریوں کا عرصہ دراز سے مطالبہ ہے کہ سرکلر روڈ پر وکٹوریہ ہسپتال کے سامنے فلائی اوور بنایا جائے مگر آج تک اس پر حکومت کی جانب سے کوئی کارکردگی سامنے نہیں آئی ۔قبل ازیں ڈاکٹر سید وسیم اختر نے بہاولپور میں نظام کی تبدیلی کے بعد محکمہ کے 160ورک چارج ملازمین کوفارغ کرنے اور پانچ ماہ کی تنخواہ ادانہ کرنے کی جانب توجہ دلائی اور کہاکہ ان کی بحالی عمل میں لائی جائے جس پر پارلیمانی سیکرٹری نے یقین دھانی کروائی کہ ان ملازمین کو بحال کیا جائیگا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -