آئندہ برس صوبے کے تمام عوام کو صحت انصاف کارڈ دیئے جائینگے :عمران خان

آئندہ برس صوبے کے تمام عوام کو صحت انصاف کارڈ دیئے جائینگے :عمران خان

  

نوشہرہ(بیورورپورٹ) پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان سڑکوں اور پلوں کی تعمیر سے کبھی بھی ترقی نہیں کرسکتا عوام کو معیاری تعلیم اور بہتر صحت کے ساتھ ساتھ انصاف کی فراہمی سے ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہوسکتا ہے کے پی کے کے سرکاری ہسپتالوں کو ایسا بنادیا دیا گیا ہے کہ امیر طبقہ بھی سرکاری ہسپتالوں کا رخ کریں گے 50فیصد صحت کارڈ عوام میں تقسیم کئے جاچکے ہیں جبکہ آئندہ سال پورے صوبے میں عوام کو صحت کارڈ دئیے جائیں گے قاضی حسین احمد جیسے بین الاقوامی لیڈر اور ہمارے نظریات ایک جیسے ہیں لیکن میں حیران ہوں کہ انہوں نے مولانا فضل الرحمن جیسے شخص سے کیسے اتحاد کیا تھا لیکن غلطیاں انسان سے ہوتی ہیں لیکن آئندہ ایسا نہیں ہوگا لیگی ایم این اے جاوید لطیف جس کا نام لینا بھی میں توہین سمجھتا ہوں میں اس انتظار میں ہوں کہ نواز شریف اس کو اسمبلی سے کیسے باہر کرے گا اگر نواز شریف نے اس پر خاموشی اختیار کردی تو میں سمجھوں گا کہ جاوید لطیف جیسے بدتمیز شخص کے پیچھے نوازشریف کھڑا ہے اگر میرے ایم این اے نے جاوید لطیف جیسے غلیظ زبان استعمال کی ہوتی تو میں اسی وقت اسے تحریک انصاف سے فارغ کردیتا ان خیالات کااظہار عمران خان نے نوشہرہ میں قاضی حسین احمد میڈیکل کمپلیکس اور نوشہرہ میڈیکل کالج کے افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا تقریب سے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خان خٹک، صوبائی وزیر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن میاں جمشیدالدین کاکاخیل، جماعت اسلامی کے امیر مشتاق احمدخان، قاضی حسین احمدکے صاحبزادے آصف لقمان قاضی نے بھی خطاب کیا اس موقع پر ایم این اے ڈاکٹرعمران خٹک، صوبائی وزیر تعلیم عاطف خان، ضلعی ناظم اعلیٰ لیاقت خان خٹک، ایم پی اے ادریس خٹک، ایم پی اے خلیق الرحمن بھی موجود تھے عمران خان نے کہا کہ میں خیبرپختونخوا کی صوبائی حکومت کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں جن کی کوششوں سے پورے صوبے میں تعلیم اور صحت کا نظام مثالی بنادیاگیا ہے جبکہ KPKپولیس کو سیاست سے پاک کرکے خود مختار بنادیا ہے جو پورے پاکستان کیلئے ایک مثالی پولیس بن چکی ہے انہوں نے کہا کہ ہم صوبے میں تعلیمی اداروں، ہسپتالوں کا افتتاح کریں گے جبکہ نواز شریف سڑکوں اور پلوں کے افتتاح میں مصروف ہیں میں نوازشریف کو بتانا چاہتا ہوں کہ قومیں سڑکوں اور پلوں کی تعمیر سے نہیں بنتی جبکہ تعلیم اور صحت کی سہولیات کی فراہمی سے بنتی ہے ہمیں انسانوں پر پیسہ خرچ کرنا ہوگا سڑکوں پر نہیں سرکاری ہسپتالوں میں جو تبدیلی آئی ہے وہ انقلاب کا پیش خیمہ ثابت ہورہا ہے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -