گستاخانہ مواد مستقل اور پوری طرح بلاک کرنے تک فیس بک کوپاکستان میں بند کیا جائے: اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر

گستاخانہ مواد مستقل اور پوری طرح بلاک کرنے تک فیس بک کوپاکستان میں بند کیا ...
گستاخانہ مواد مستقل اور پوری طرح بلاک کرنے تک فیس بک کوپاکستان میں بند کیا جائے: اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن ) پاکستان میں فیس بک کوعارضی طور پر بند کر نے کے حوالے سے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی۔

پرو پاکستانی کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ گستاخانہ مواد کومستقل اور پوری طرح بلاک کرنے تک فیس بک کو پاکستان میں بند کیا جائے ۔

سول سوسائٹی کی جانب سے دائر درخواست کے اندر پاکستان میں فیس بک اور سوشل میڈیا کی دیگر ویب سائٹس پر گستاخانہ مواد کے حوالے سے میڈیا رپورٹس اور چیئرمین پی ٹی اے کے بیان کا حوالہ بھی دیا گیا ہے جس میں انہوں نے عدالت کے سامنے اعتراف کیا تھا کہ انہوں نے گستاخانہ مواد رکھنے والے پیجز کو بند کر دیا ہے تاہم تحریروں ، خاکوں اور ویڈیوز کی شکل میں مقدس ہستیوں کے خلاف مواد فیس بک پر ابھی بھی پوسٹ کیا جا رہا ہے ۔

ٹی وی اداکار ایاز خان کی دکان میں ڈکیتی , دکان کس چیز کی تھی جانکر آپ بھی دنگ رہ جائیں گے

درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ چیئر مین پی ٹی اے نے بیان دیا تھا کہ جب تک پبلک سیکٹر کی جانب سے ایسے نئے صفحات کے بارے میں معلومات اور نشاندہی نہیں کی جاتی تب تک ایسے مواد کوبند کرنا ممکن نہیں ۔

درخواست گزارکا کہنا ہے کہ اگر پی ٹی اے ان گستاخانہ پیجز کو بند نہیں کر پائی تو اس سے مسلم امہ کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو سکتا ہے کیونکہ اس کا سیدھا سیدھا مقصد یہی ہو گا گستاخانہ پیجز اور آئی ڈیز وغیر ہ آن لائن رہیں گی ۔

مزید :

قومی -اہم خبریں -