امریکی سفارتخانے کے اہلکار کے خلاف اسکی سابقہ اہلیہ نے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹا دیا

امریکی سفارتخانے کے اہلکار کے خلاف اسکی سابقہ اہلیہ نے عدالت کا دروازہ ...
امریکی سفارتخانے کے اہلکار کے خلاف اسکی سابقہ اہلیہ نے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹا دیا

  

اسلام آباد(آن لائن) امریکی سفارتخانے کے اہلکار کے خلاف اسکی سابقہ اہلیہ نے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹا لیا، 4نو عمر بچوں کی بازیابی کے لئے دائر درخواست پر عدالت نے تھانہ سیکرٹریٹ کو احکامات جاری کر دیئے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی سفارتخانے کے اہلکار اظہر محمود کے خلاف اسکی سابقہ اہلیہ نے ضلعی عدالت اسلام آباد میں حبس بے جا کی درخواست دائر کر دی۔ درخواست میں مدعیہ عظمیٰ اظہر نے مؤقف اپنایا ہے کہ اس کے شوہر، جو کہ امریکی سفارتخانے میں ملازم ہے اور ایک با اثر شخصیت ہے نے اگست2016ء میں اسے طلاق دیکر اس کے 4بچے چھین کر تین کپڑوں میں اسے گھر سے نکال دیا۔ چاروں بچے نو عمر ہیں جبکہ ان میں سے شیر خوار بھی ہے۔ مدعیہ نے عدالت سے استدعا کی ہے کہ امریکی سفارتخانہ اسلام آباد کے اہلکار کی ناجائز تحویل سے اس کے چاروں بچے برآمد کراکر واپس دلوائے جائیں۔

حبس بے جا کی اس درخواست کو ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن اسلام آباد نے قابلِ سماعت قرار دیکر ایڈیشنل سیشن جج رخشندہ شاہین کو منتقل کر دی۔ فاضل جج نے درخواست پر کارروائی کرتے ہوئے تھانہ سیکرٹریٹ پولیس اور عدالتی بیلف کو مدعیہ کے چاروں بچے عبداللہ، محمد علی، مریم اور دعا کو برآمد کر کے عدالت پیش کرنے کا حکم دیدیا۔ واضح رہے کہ ان بچوں میں سب سے بڑے بچے کی عمر 11سال جبکہ سب سے چھوٹے بچے کی عمر ڈیڑھ سال ہے۔

مزید :

اسلام آباد -