عراق کی ایک قبر میں سے سینکڑوں ایسی چیزیں نکل آئیں کہ جان کر کوئی بھی شدید پریشان ہوجائے گا

عراق کی ایک قبر میں سے سینکڑوں ایسی چیزیں نکل آئیں کہ جان کر کوئی بھی شدید ...
عراق کی ایک قبر میں سے سینکڑوں ایسی چیزیں نکل آئیں کہ جان کر کوئی بھی شدید پریشان ہوجائے گا

  

بغداد (مانیٹرنگ ڈیسک) عراق کے شہر موصل سے شدت پسند تنظیم داعش کی پسپائی کے بعد پے در پے خوفناک انکشاف کا سلسلہ جاری ہے۔ گزشتہ چند ماہ کے دوران موصل کے متعدد مقامات پر اجتماعی قبروں کا انکشاف ہو چکا ہے، اور ویب سائٹ مسلم پریس کی رپورٹ کے مطابق شہر کے شمال مغرب میں ایک اور اجتماعی قبر دریافت ہوگئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق حشد الشابی کے سیکنڈ بریگیڈ نے یہ اجتماعی قبر بادوش جیل میں دریافت کی ہے، جس میں سے 500 سے زائد لاشیں برآمد ہوئی ہیں۔ خیال ظاہر کیا جارہا ہے کہ داعش نے ان افراد کو بادوش جیل پر قبضے کے بعد ہلاک کرکے اجتماعی قبر میں دفن کیا۔

زمین میں نظر آنے والا عام سا سوراخ، لیکن ایک شہری نے اس کے اندر جاکر دیکھا تو 700 سال پرانی ایسی چیز مل گئی کہ واقعی ہوش اُڑگئے، کوئی تصور بھی نہ کرسکتا تھا کہ۔۔۔

تین ماہ قبل موصل شہر کے ایک گاﺅں میں بھی اجتماعی قبر دریافت ہوئی تھی، جس میں درجنوں افراد کو دفن کیا گیا تھا۔ یہ اجتماعی قبر حمام العلیل کے علاقے میں دریافت ہوئی تھی۔ اس واقعہ کے بعد گزشتہ ماہ عراقی فورسز نے سب سے بڑی اجتماعی قبر کی دریافت کا دعویٰ کیا، جس میں مبینہ طور پر ہزاروں افراد کو دفن کیا گیا تھا۔ یہ اجتماعی قبر دارالحکومت بغداد کے شمال میں 400 کلومیٹر دوری پر دریافت ہوئی تھی۔ ڈیلی ٹیلی گراف کی رپورٹ کے مطابق اس میں 4000 سے زائد افراد کو دفن کیا گیا تھا۔ عام شہریوں کو اس بڑے پیمانے پر قتل کر کے اجتماعی طور پر دفن کرنے کی کوئی دوسری مثال مشکل سے ہی مل سکتی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -