مقبول قیادت کوسیاسی جماعت کی قیادت سے نہیں ہٹایاجاسکتا،نویدشاہ

مقبول قیادت کوسیاسی جماعت کی قیادت سے نہیں ہٹایاجاسکتا،نویدشاہ

  

لاہور(جنرل رپورٹر)مسلم سٹوڈنٹس فیڈریشن لاہورڈویژن کے سابق صدراورپاکستان مسلم لیگ (ن)نیویارک کے ممتازرہنمانویدشاہ نے کہا ہے کہ مقبول قیادت کوسیاسی جماعت کی قیادت سے نہیں ہٹایاجاسکتا۔فیصلے پسندناپسندکے تحت نہیں بلکہ آئین میں درج آرٹیکل کی روشنی میں کئے جاتے ہیں۔ماضی میں کسی کوپارٹی صدارت سے ہٹانے کی مثال نہیں ملتی ۔میاں نوازشریف اورعوام کے درمیان کوئی دیوار حائل نہیں ہونے دیں گے۔

سینیٹ الیکشن میں مسلم لیگ (ن) کی تاریخی برتری سے میاں نوازشریف کوسروری نصیب ہوئی۔بدترین ہارس ٹریڈنگ کے باوجود چیئرمین سینیٹ مسلم لیگ (ن) سے منتخب ہوگا۔سینیٹ الیکشن میں اناڑیوں اورکھلاڑیوں کوڈکٹیشن ملی اورسازش کرنیوالے عناصر آشکارہوئے۔وہ اپنے اعزازمیں ایک استقبالیہ سے خطاب کررہے تھے۔نویدشاہ نے مزید کہا کہ میاں نوازشریف کی سروری ،برتری اورسرفرازی سے حسد کرنیوالے ہمارامینڈیٹ چوری کرنے میں ناکام رہے۔مریم نوازکسی چٹان کی طرح اپنے قائداورشفیق والدمیاں نوازشریف کی پشت پرکھڑی رہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمارے منتخب ارکان کے ضمیر کی بولیاں لگانیوالے اب اپنامنہ چھپارہے ہیں۔مقبول قیادت کوپارٹی صدارت سے نہیں ہٹایاجاسکتا۔انہوں نے کہا کہ تعمیری سیاست کے بغیرریاست کاوجود برقرارنہیں رہ سکتا۔آئینی اورسیاسی ادارے اپنے اپنے دائرہ کار کے مطابق کام کر یں ،اس سے جمہوریت اورمعیشت مضبوط ہوگی ۔انہوں نے کہا کہ ہماری ریاست منافرت، تعصبات اورانتقامی سیاست کامتحمل نہیں ہوسکتی،میاں نوازشریف کے تحفظات سے چشم پوشی نہیں کیاجاسکتی۔ اپوزیشن والے حکومت کی آڑ میں ریاست پرحملے نہ کریں۔انہوں نے کہا کہ عوام آئندہ عام انتخابات میں ووٹ سے نفاق اورنفرت کی سیاست کوراوی بردکردینگے۔ اگرپاکستان میں گڈگورننس نہ ہوتی توبیرونی سرمایہ کار وہاں کارخ نہ کرتے مگر اس کے باوجود کچھ مسترداورمایوس سیاسی عناصر حکومت کوزچ کرنے جبکہ بیرونی سرمایہ کاری روکنے کیلئے بیڈگورننس کاڈھول پیٹ رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ریاست ماں ہوتی ہے ،جبکہ کچھ لوگ پاکستان کی منتخب وفاقی حکومت کے ساتھ دشمنی کی آڑمیں ریاست کے ساتھ سیاست کررہے ہیں۔ریاست کے ساتھ سیاست اورپاکستان کے قومی مفادات پرحملے کرنیوالے قابل اعتماد نہیں ہوسکتے ۔ انہوں نے کہا کہ اقتصادی راہداری منصوبہ پرسیاست چمکانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی ۔قومی مفادات پرتنازعات کھڑے کرنیوالے بیرونی دشمنوں سے بڑے دشمن ہیں۔انہوں نے کہا کہ سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کے خلوص اورصادق جذبوں کی بدولت اقتصادی راہداری منصوبہ کامیابی سے ہمکنارہوگاجبکہ رکاوٹیں حائل کرنیوالے عناصر اپنے مذموم عزائم میں بری طرح ناکام ونامرادہوں گے۔ماضی کی نااہل حکومت نے پاکستان کومعاشی طورپردیوالیہ کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی تھی جبکہ سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کے ویژن کومشعل راہ بناتے ہوئے وفاقی حکومت قومی معیشت کوٹیک آف کی پوزیشن پرلے آ ئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی معاشی خودکفالت سابق وزیراعظم میاں نوازشریف کی ترجیحات میں سرفہرست ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -