نگراں وزیر اعظم تقرر، اختیار کسی اور کے پاس نہیں جانے دینگے : خورشید شاہ

نگراں وزیر اعظم تقرر، اختیار کسی اور کے پاس نہیں جانے دینگے : خورشید شاہ

  

اسلام آباد (صباح نیوز) قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ نے نگران وزیراعظم کی کارکردگی کے معاملے پر متحدہ حزب اختلا ف کا مشترکہ مشاورتی اجلاس طلب کرنے کا اعلان کر دیا۔ پاکستان پیپلزپارٹی، پاکستان تحریک انصاف، جماعت اسلامی، عوامی نیشنل پار ٹی ، قومی وطن پارٹی، ایم کیو ایم اور قوم پرست جماعتوں کے رہنما شریک ہونگے۔ پاکستان تحریک انصاف سے مشاورت کے بعد متحدہ حزب اختلاف کے اجلاس کی تاریخ کا اعلان کر دیا جائے گا۔ سید خورشید شاہ نے واضح کیا ہے کہ نگران وزیراعظم کی نامزدگی کا اختیار کسی اور کے پا س نہیں جانے دینگے۔ پارلیمنٹ کو ہی اس معاملے میں سرخروئی ملے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز پارلیمنٹ ہاؤس میں سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق سے سبکدوش چیئرمین میاں رضا ربانی کے ہمراہ ملاقات کے موقع پر میڈیا سے گفتگو میں کیا ۔ سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق اور اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ کے درمیان ملاقات میں اہم سیاسی امور اور سیاسی جماعتوں میں اہم قومی معاملات پر تعا و ن پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ خورشید شاہ کا مزید کہنا تھا نگران وزیراعظم مقرر کرنے کے معاملہ پر اپنی داڑھی کسی اور کے ہاتھ میں نہیں دینگے،اپنے ہاتھ میں رکھیں گے اور پارلیمنٹ کو اس معاملے میں سرخروئی ملے گی، حزب اختلاف کی جماعتوں سے نگران سیٹ اپ پر ابتدائی مشاورت ہوئی ہے، پاکستان تحریک انصاف کے رہنما شاہ محمود قریشی سے ہونیوالی مشاورت کے بعد متحدہ حزب اختلاف کا مشاورتی اجلاس طلب کیا جائے گا، ویسے تو پیر اور پیر نیوں کا دور ہے اور سیدوں کی کون سنتا ہے، تاہم پارلیمنٹ کا اختیار کسی اور کے پاس نہیں جانے دینگے۔ متحدہ حزب اختلاف کی جماعتوں سے نگران وزیراعظم کیلئے نام بھی لئے جائینگے، اپنی طرف سے تجویز کردہ نام سے بھی آگاہ کرینگے۔ اپوزیشن جماعتوں میں اتفاق رائے کے نتیجے میں وزیراعظم کو آگاہ کر دینگے اور نگران وزیراعظم کے نام کا اعلان کر دیا جائے گا۔

خورشید شاہ

مزید :

صفحہ اول -