پاکستان،ایران مابین برادرانہ تعلقات پائے جاتے ہیں،سردارایازصادق

پاکستان،ایران مابین برادرانہ تعلقات پائے جاتے ہیں،سردارایازصادق

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے پیر کے روز سپیکر قومی اسمبلی سر دار ایاز صادق سے ملاقات ملاقات میں باہمی تعلقات اور خطے کے مسائل امن و استحکام پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔ایرانی وزیر خارجہ کے ہمراہ اعلیٰ سطحی وفد اور پاکستان میں ایران کے سفیر مہدی ہنر مند دوست بھی موجود تھے ۔سپیکر قومی اسمبلی نے دونوں ممالک کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون پر زور دیتے ہوئے اعلی سطح پر وفود کے تبادلوں پر اطمینان کا اظہار کیا ۔ انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ باہمی مفادات کے لیے دونوں ممالک تجارت سر مایہ کاری توانائی اور دیگر شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کے لیے رابطوں کو جاری رکھیں گے ۔سر دار ایاز صادق نے کہا کہ پاکستان مسلم ممالک میں اتحاد پر یقین رکھتا ہے ۔انہوں نے وفد کواُمت مسلمہ کو درپیش مسائل کے حل کے لیے پاکستان اور ایران کے مابین قریبی تعاون کو فروغ دینے کی ضرورت پر زور دیا ۔انہوں نے بین الاقوامی اہمیت کے حامل معاملات پر بھی دونوں ممالک کو اتفاق رائے کے ساتھ آگے بڑھنے کی ضرورت پر زور دیا ۔انہوں نے خطے میں ہم آہنگی کو فروغ دینے کے پاک ۔ایران پارلیمانی رابطوں میں اضافے کی ضرورت پر زور دیا ۔ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے دونوں ممالک کے مابین پارلیمانی و دوطر فہ تعلقات کو مستحکم بنانے سمیت تمام شعبوں بشمول تجارتی و اقتصادی تعاون فروغ کو دینے کے ساتھ ساتھ سرحدی اور سیکورٹی کے معاملات پر بات چیت میں اضافے کے لیے سپیکر قومی اسمبلی کی کاوشوں پر ان کا شکریہ ادا کیا۔انہوں نے ایرانی قیادت اور حکومت کی طرف سے دو طرفہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کے لیے کوششوں کو جاری رکھنے کی خواہش کا پیغام بھی سپیکر کو پہنچایا ۔جواد ظریف نے کہا کہ ایران خطے میں امن کے قیام کے لیے پاکستان کو اپنا شراکت دار سمجھتا ہے انہوں نے امید کا اظہار کیا کہ مستقبل میں دونوں ملک مل کر امن و خوشحالی کے راستے آگے بڑھیں گے انھوں نے ایاز صادق کی دونوں ممالک کے مابین تجارتی و اقتصادی شعبوں میں اضافے کی تجویز کو سراہا اور باہمی تعاون کے نئے مواقعوں کی تلاش کے لیے متعلقہ پارلیمانی کمیٹی کی سطح پر جامع مصروفیات کی ضرورت پر زور دیا۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -