صادق سنجرانی کا چیئرمین سینیٹ انتخاب جمہوریت کی فتح: پیپلز پارٹی، تحریک انصاف، مفادات کا کھیل کھیلا گیا: مسلم لیگ(ن)

صادق سنجرانی کا چیئرمین سینیٹ انتخاب جمہوریت کی فتح: پیپلز پارٹی، تحریک ...

  

ملتان ( سٹاف رپورٹر) میر صادق سنجرانی کا چیئرمین سینیٹ منتخب ہو نا جمہوری قوتوں کی جیت ہے ۔ بلوچستان میں شر پھیلانے والوں کے عزائم خاک میں مل گئے ہیں۔ ایک دوسرے کو برا بھلا کہنے والے کھلاڑی اور مداری مفاد کے لئے اکٹھے ہو گئے ان خیالات کا اظہار میر محمد صادق سنجرانی کے چیئرمین سینیٹ منتخب ہونے پر پیپلز پارٹی ‘ تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں نے ردعمل میں کیا۔ پیپلز پارٹی جنوبی پنجاب کے سینئر نائب صدر خواجہ رضوان عالم نے کہا ہے کہ میر صادق سنجرانی کو چیئرمین سینیٹ منتخب کراکر پیپلز پارٹی نے اپنی طاقت شو کر دی ہے ۔ حالات نظر آرہے ہیں کہ الیکشن 2018میں فتح پیپلز پارٹی کی ہوگی۔ آصف زرداری کے عزم کے مطابق پنجاب میں بھی پیپلز پارٹی ہی حکومت بنائے گی ۔ پیپلز پارٹی ملتان ڈویژن کے جنرل سیکرٹری ‘ سابق ایم پی اے ڈاکٹر جاوید صدیقی نے کہا ہے کہ میر صادق سنجرانی کا چیئرمین سینیٹ منتخب ہونا جمہوری قوتوں کی جیت ہے ۔ مسلم لیگ(ن) کو اس کا تکبر لے ڈ وبا ہے ۔ آگے آگے دیکھیں ہوتا ہے کیا۔الیکشن 2018میں بھی پیپلز پارٹی کلین سویپ کرے گی اور عوا م کی بھلائی کے لئے دن رات ایک کر دے گی۔پاکستان تحریک انصاف جنوبی پنجاب کے سینئر نائب صدر چوہدری خالد جاوید وڑائچ نے کہا ہے کہ عمران خان اپنے ملک اور عوام کے ساتھ بے پناہ محبت کرتے ہیں ۔ بلوچستان میں غیر ملکی قوتیں شر پھیلا کر اپنے مذموم عزائم کی تکمیل کرنا چاہتیہیں ۔ عمران خان نے اپنی سیاسی بصیرت سے بلوچستان سے چیئرمین سینیٹ منتخب کراکر یہ تاثر دیا ہے کہ بلوچستان کو وفاق میں خاص اہمیت حاصل ہے جہاں سے چیئرمین سینیٹ کا منتخب ہونا اس بات کا غمازی ہے کہ بلوچستان اور وہاں کے عوام کو اہمیت دی جارہی ہے ۔ اس صورتحال میں ملک دشمنوں کے عزائم خاک میں مل گئے ہیں۔تحریک انصاف ضلع ملتان کے صدر اعجاز حسین جنجوعہ نے کہا ہے کہ پارٹی چیئرمین عمران خان نے بلوچستان سے چیئر مین سینیٹ کو منتخب کراکر سیاسی بصیرت کا ثبوت دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عوام باشعور ہو چکے ہیں ۔ وہ جانتے ہیں کہ تحریک انصاف ہی وہ جماعت ہے جو قوم کو مسائل کے گرداب سے نجات دلا سکتی ہے ۔مسلم لیگ (ن) ملتان شہر کے جنرل سیکرٹری شیخ طارق رشید نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) اصولوں کی سیاست کرتی ہے ۔آصف زرداری کے تو کوئی اصول ہی نہیں ہیں لیکن عمران خان نے بھی ثابت کر دیا ہے کہ مفاد کے لئے وہ کچھ بھی کر سکتے ہیں اورآصف زرداری جیسے سیاستدان کے ساتھ بھی اتحاد کر سکتے ہیں ۔ مسلم لیگ (ن) کے رہنما و میئر ملتان چوہدری نوید الحق ارائیں نے کہا ہے کہ عمران خان نے آصف زرداری کو ڈاکو‘ کرپٹ اور نہ جانے کیا کیا القاب دئیے ہیں ۔ ہر مرتبہ یہی کہا کہ آصف زرداری کے ساتھ کسی صورت میں اتحاد نہیں ہو سکتا مگر اب مفاد کی خاطر آصف زرداری کے ساتھ ہی سمجھوتہ کرکے بے اصول ہونے کا ثبوت دے دیا ہے۔ ایک دوسرے کو برا بھلا کہنے والے کھلاڑی اور مداری مفاد کے لئے اکٹھے ہو گئے ہیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -