عدلیہ مخالف تقاریر:نوازشریف اور مریم نواز کو نوٹس جاری،15 مارچ تک جواب طلب

عدلیہ مخالف تقاریر:نوازشریف اور مریم نواز کو نوٹس جاری،15 مارچ تک جواب طلب
عدلیہ مخالف تقاریر:نوازشریف اور مریم نواز کو نوٹس جاری،15 مارچ تک جواب طلب

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور ہائیکورٹ نے نوازشریف اور مریم نوازکو عدلیہ مخالف تقاریر پر نوٹس جاری کردیا اور 15 مارچ تک جواب طلب کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں نوازشریف اور مریم نواز کیخلاف عدلیہ مخالف تقاریر درخواست کی سماعت ہوئی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ نوازشریف اور مریم نواز عوام کو عدلیہ مخالف اکسانے سے باز نہیں آ رہے ،مریم نواز جلسوں اورشوشل میڈیا پر عدلیہ کو تضحیک کا نشانہ بنا رہی ہیں۔عدالت سے استدعا ہے کہ ان کیخلاف توہین عدالت کی کارروائی کی جائے۔درخواست میں پیمرا کو بھی فریق بنانے کی درخواست بھی کی گئی ۔

عدالت نے سیکرٹری پیمرا کو بھی کیس میں فریق بنانے کی اجازت دے دی اور نوازشریف، مریم نوازاور پیمراکو نوٹس جاری کرتے ہوئے 15 مارچ تک جواب طلب کر لیا۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے سابق وزیراعظم نوازشریف، وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف اور کیپٹن صفدر کیخلاف توہین عدالت کی درخواست خارج کردی، عدالت کا کہناتھا کہ ان کی تقاریر جے آئی ٹی کے بارے میں تھیں ان میں کوئی توہین عدالت نہیں۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -