سعودی حکام نے مکہ مکرمہ اور ریاض میں ملاوٹی زمزم اور کھجوریں ضبط کرلیں

سعودی حکام نے مکہ مکرمہ اور ریاض میں ملاوٹی زمزم اور کھجوریں ضبط کرلیں

 جدہ(محمد اکرم اسد) سعودی حکام نے مکہ مکرمہ اور ریاض میں ملاوٹی زمزم اور کھجوریں ضبط کرلیں اور جعلسازوں کو گرفتار کرکے متعلقہ اداروں کے حوالے کردیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق مکہ مکرمہ میونسپلٹی کی اشرائع بلدیہ کے افسران نے جعرافہ کے علاقے میں میں ایک استرامہ کے اندر غیر منظم طریقے سے ملاوٹی آبِ زمزم کی پیکنگ کا کارخانہ دریافت کیا جہا ں غیر قانونی کارکن ملاوٹی زمزم کے پیکٹ تیار کررہے تھے۔ اشرائع بلدیہ کے چیئرمین انخر فہد البشری نے بتایا کہ ملاوٹی زمزم کے ڈبے کثیر تعداد میں مذکورہ مقام پر ذخیرہ تھے اور ان پر آب زمزم فیکٹری کے اسٹیکرز چسپاں کرکے فروخت کئے جا رہے تھے،یہ تمام اشیاء ضبط کرلی گئیں ہیں اور جعلی کارخانے کو سر بمہر کردیا گیا ۔قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کو کاروائی کے لئے سکیورٹی اداروں کی تحویل میں دے دیا گیا۔ حکام کا کہنا ہے کہ مذکورہ جگہ سے 10ہزار خالی ڈبے ،10لیٹر کے 150گیلن اور واٹر پمپ بھی ضبط کرلیے گئے۔ دوسری طرف وزارت تجارت و صنعت نے جنوبی ریاض کے المناح محلے کے ایک بڑے علاقہ سے ملاوٹی کھجوریں پیک کرنے والے غیر ملکی کارکن گرفتار کیے ہیں۔ وزارت نے اپنے جاری کردہ اعلامیے میں واضح کیا کہ ایک اطلاع پر مذکورہ مقام پر چھاپہ مارا گیا تھا وہاں غیر ملکی کارکن بادام، انجیر اور مختلف میوہ جات کھجوروں میں بھر کر پیک کررہے تھے اور صارفین کو یہ تاثر دیا جارہا تھا کہ اعلیٰ درجے کی کھجوریں پیکٹوں میں محفوظ ہیں ۔ پیکٹوں کے اوپر مشہور کمپنیوں کے مارکے چسپا ں کیے جارہے تھے ،سارا امترامہ کام ایک آلودہ سوئمنگ پول کے اندر انجام دیا جارہا تھا۔ وزارت کے افسران نے تمام سامان سربمہر کردیا اور ذمہ داران کو قانونی کاروائی کے لیے طلب کرلیا گیا ۔ وزارت نے تمام صارفین سے اپیل کی ہے کہ اگر انہیں کھانے پینے کی کسی شے میں کسی قسم کی کوئی آلودگی و ملاوٹ کا شبہ ہو تو پہلی فرصت میں 1900پر رابطہ کر کے مطلع کریں۔  B

مزید : صفحہ آخر