تباہ حال نیپال میں زلزلے نے پھر قیامت ڈھا دی ‘ 60افراد ہلاک 1000سے زائد زخمی

تباہ حال نیپال میں زلزلے نے پھر قیامت ڈھا دی ‘ 60افراد ہلاک 1000سے زائد زخمی

 کھٹمنڈو/ نئی دہلی / ڈھاکہ/ مینگورہ(آئی این پی ) نیپال اور بھارت میں ایک بار پھر زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کئے گئے جس کے نتیجے میں60 افراد ہلاک اور1000 سے زائد زخمی ہوگئے،زلزلے سے متعدد عمارتیں بھی مہندم ہوگئیں جبکہ لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا ،نئی دہلی میں میٹرو سروس معطل کردی گئی ،زلزلے کے بعدکھٹمنڈو ایئرپورٹ عارضی طور پر بند کردیا گیاجبکہ متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیاں شروع کردی گئیں۔منگل کو غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی جیولوجیکل سروے کا کہنا ہے کہ نیپال کے مختلف شہروں میں 7.3 شدت کا زلزلہ ریکارڈ کیا گیا، زلزلے کا مرکز ماؤنٹ ایورسٹ کے قریب نامچے باراز کا علاقہ اور زمین میں اس کی گہرائی 60 کلو میٹر ریکارڈ کی گئی۔ زلزلے کے باعث لوگوں میں شدید خوف و ہراس پھیل گیا ور لوگ اپنے گھروں اور دفاتر سے باہر نکل آئے۔زلزلہ مقامی وقت 12 بجکر 35 منٹ پر آیا۔وزارت داخلہ کے حکام کا کہنا ہے کہ زلزلے سے 36 افراد ہلاک اور 1117 زخمی ہوئے ہیں۔زلزلے سے دارالحکومت کھٹمنڈو سمیت مختلف علاقوں میں لوگ خوفزدہ ہوکر کھلے مقامات پر نکل آئے، جبکہ کھٹمنڈو ایئرپورٹ کو عارضی طور پر بند کردیا گیا۔امدادی اداروں کے مطابق کھٹمنڈو کے مشرق میں واقع چوتارہ نامی قصبے میں کئی عمارتیں تباہ ہوئی ہیں اور وہاں چار افراد کے ہلاک ہو جانے کی اطلاعات ہیں۔مہاجرین کے بین الاقوامی ادارے ’انٹرنیشنل آرگنائزیشن فار مائیگریشن‘ کا کہنا ہے کہ چوتارہ میں ملبے میں دب جانے والے لوگوں کو نکالا جا رہا ہے۔ زلزلے کے جھٹکے بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی، ریاست اڑیسہ، بہار، آسام، پٹنہ میں بھی محسوس کیے گئے۔حکام کاکہنا ہے کہ زلزلے سے 12افراد ہلاک ہوئے ہیں۔ زلزلے کے باعث نئی دہلی میں میٹرو سروس معطل کردی گئی۔ زلزلے کے باعث لوگ گھروں اور دفاتر سے باہر نکل آئے جبکہ پاکستان اور بنگلہ دیش کے مختلف علاقوں میں بھی ہلکی نوعیت کے جھٹکے محسوس کئے گئے۔ چینی میڈیا کے مطابق تبت میں زلزلے کے نتیجے میں ایک شخص ہلاک ہوا۔زلزلے سے کئی عمارتیں زمین بوس ہوگئیں اور متعدد کو شدید نقصان پہنچا، بعد ازاں 5.1 سے 6.3 شدت تک کے آفٹر شاکس بھی محسوس کیے گیے جن کا سلسلہ اب بھی جاری ہے۔واضح رہے کہ25 اپریل کو 7.8 شدت کے زلزلے نے جنوب مشرقی ایشیا کے اس پسماندہ ملک میں تباہی برپا کر دی تھی اور اس سے 8000 سے زائد لوگ ہلاک جب کہ دارالحکومت کٹھمنڈو سمیت مختلف علاقوں میں املاک کو شدید نقصان پہنچا تھا۔اقوام متحدہ کے مطابق اس زلزلے سے 80 لاکھ افراد متاثر ہوئے۔ امداد اور بحالی کے کام میں امریکہ اور پاکستان سمیت دنیا کے مختلف ممالک کی ٹیمیں تاحال نیپال میں موجود ہیں۔اس زلزلے سے بھارت، چین اور بنگلہ دیش میں بھی جانی نقصان ہوا تھا جبکہ ماؤنٹ ایورسٹ پر زلزلے کے باعث برفانی تودے گرنے سے کم ازکم 18 کوہ پیما بھی ہلاک ہوگئے تھے۔

مزید : صفحہ اول