متحدہ عرب امارات نے اگلے ماہ سے تیل کی پیدا وار گھٹانے کا اعلان کر دیا

  متحدہ عرب امارات نے اگلے ماہ سے تیل کی پیدا وار گھٹانے کا اعلان کر دیا

  

دبئی(آن لائن)دنیا بھر میں لاک ڈان کے بعد تیل کی قیمتیں تاریخ کی انتہائی نچلی سطح پر آگئی ہیں، سعودی عرب، روس اور امریکا کے درمیان تیل کی قیمتوں کے حوالے سے شدید اختلافات کی خبریں بھی سامنے آئی ہیں۔ دنیا بھر میں کرفیو اور لاک ڈان کے باعث سڑکوں پر ٹریفک نہ ہونے کے برابر ہے جس کی وجہ سے تیل کی کھپت نہیں ہو رہی، جس کا اوپیک ممالک تیل پیدا اور برآمد کرنے والے ممالک کو بہت بڑا نقصان ہوا ہے اور ان کی معیشت تباہی کی جانب جا رہی ہے۔خبر رساں اداراہ کے مطابق وزیر توانائی نے اعلان کیا ہے کہ وہ جون سے اپنی تیل کی یومیہ پیداوار میں کمی کر دے گا۔وزیر توانائی سہیل المزروعی نے ایک بیان میں کہا ہے کہ جون سے اماراتی مملکت تیل کی پیداوار میں یومیہ ایک لاکھ بیرل کی کمی کر دے گی۔یومیہ پیداوار میں یہ کمی اوپیک ممالک کے ساتھ بات چیت کے نتیجے میں کی جا رہی ہے۔اس سے قبل سعودی عرب اور کویت کی جانب سے بھی خام تیل کی سپلائی میں کمی کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔ امارات کی جانب سے سعودی مملکت کے فیصلے کی حمایت میں تیل کی یومیہ پیداوار گھٹائی جا رہی ہے تاکہ تیل کی گرتی ہوئی قیمتوں کو استحکام دیا جا سکے، جس سے تیل پیدا کرنے والے ممالک کی معیشت کو لاحق ہونے والے خطرات کے آگے بند باندھا جا سکے۔

تیل کی پیداوار

مزید :

صفحہ آخر -