لودھراں، حاصل پور میں حادثے،2افرادجاں بحق، گھروں میں کہرام

لودھراں، حاصل پور میں حادثے،2افرادجاں بحق، گھروں میں کہرام

  

لودھراں، حاصل پور، رحیم یارخان(بیورو رپورٹ، نمائندہ پاکستان، نمائندہ خصوصی)متڑاں دربار کے قریب ایک شخص کام کے دوران کنویں میں گر کر موقع پر جانبحق ہوگیا۔ اطلاع ملتے ہی ریسکیو ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور ریسکیو آپریشن کرتے ھوئے نعش کو کنویں سے باہر نکالا (بقیہ نمبر11صفحہ6پر)

جانبحق شخص کا نام محمد شریف ولد اللّٰہ وسایا جس کی عمر تقریباً 55 سال تھی جو بستی متڑاں کا رھائشی تھا ریسکیو ٹیم نے نعش ورثہ کے حوالے کر دی ہے۔حاصل پور 69 سولنگ سٹاپ کے قریب حادثہ میں محمد نواز ولد محمد رمضان سکنہ چاہ موہل والہ شجاع آباد موٹر سائیکل نمبری MNK 4124 ہنڈا Prider پر شجاع آباد سے ہارون آباد جا رہا تھا کہ مقام بالا پر موجود ٹریکٹر ٹرالی نمبری میسی 260 اپلائیڈ فار پینچر روڈ کے کنارے کھڑی تھی مذکورہ کو نیند آنے کی وجہ سے موٹر سائیکل ٹرالی میں جا لگا جس سے مذکورہ کی موقع پر ہلاکت ہو گئی۔نعش کو ریسکیو 1122 نے THQ حاصل پور منتقل کر دیا ہے جبکہ ٹریکٹر ڈرائیور موقع پر سے فرار ہو گیا ہے۔ مقامی پولیس نے ٹریکٹر ٹرالی قبضے میں لیتے ہوئے کاروائی شروع کر دی ہے۔سابقہ جھگڑے کی رنجش پر چھ ملزمان نے شادی شدہ شخص کو ڈیرے پر بلا کر زہریلی چیز دے کر بیہمانہ تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے موت کے گھاٹ اتار دیا۔ تھانہ منٹھار کی حدود چک 140 پی کی رہائشی ریحانہ کوثر نے پولیس کو اپنی تحریری شکایت میں بیان کیا کہ چند روز قبل اس کے شوہر محمدرمضان کا منور علی کے ساتھ جھگڑا ہو گیا تھا جس کی رنجش ملزم نے دل میں رکھ لی، گذشتہ سے پیوستہ روز ملزمان کے بلانے پرمحمدرمضان اپنی موٹر سائیکل نمبری آر این ایل 4852 پر سوار ہو کران کے ڈیرے پر پہنچ گیا،جہاں سابقہ جھگڑے کی رنجش پر چھ ملزمان غلام باری، پرویز احمداور منور علی کاہلوں نے تین نامعلوم ساتھیوں کی مدد سے اسے قابو کر کے زہریلی چیز پلا دی، مزاحمت پر ملزمان نے اسے بیہمانہ تشدد کا نشانہ بنا ڈالاجس کے نتیجہ میں محمدرمضان کی موت واقع ہو گئی، ملزمان نے نعش کو مقامی زمیندار رانا محمدشریف کی فصل کماد میں پھینک دیا اور فرار ہو گئے۔اہل علاقہ نے مقتول محمدرمضان کی نعش دیکھ کر اہلخانہ اور پولیس کو اطلاع فراہم کر دی، پولیس نے موقع پر پہنچ کر نعش تحویل میں لے کر پوسٹمارٹم کے لئے شیخ زید ہسپتال منتقل کردی،مقتول کی بیوی ریحانہ کوثر کی رپورٹ پر پولیس نے ملزمان کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کر کے کارروائی شروع کردی اور پوسٹمارٹم کے بعد نعش تدفین کے لئے ورثاء کے حوالے کردی۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -