حکومت بیس بال کاٹیلنٹ لانے کیلئے گراؤنڈ بنائے،جمیل کامران

حکومت بیس بال کاٹیلنٹ لانے کیلئے گراؤنڈ بنائے،جمیل کامران

  

اسلام آباد (این این آئی) بیس بال کے انٹرنیشنل امپائر جمیل کامران نے کہا کہ ملک میں بیس بال کے ٹیلنٹ کو بروئے کار لانے کے لئے حکومت بیس بال کے گراؤنڈ بنائے۔ گذشتہ روز میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ملک میں بیس بال کے ٹیلنٹ کی کمی نہیں بلکہ وسائل کی کمی کے باعث یہ ٹیلنٹ ضائع ہونے کا خدشہ ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں بیس بال کے کھیل کا آغاز 1992 ء میں ہوا جس کے فروغ کے لئے پاکستان بیس بال فیڈریشن کے سابق صدر مرحوم سید خاور شاہ کی گراں قدر خدمات قابل تحسین ہیں کہ انہوں نے اس کھیل کی ترقی کے لئے دن رات کوششیں کیں، انہوں نے کہا کہ پاکستان اس وقت ساؤتھ ایشیاء میں دوسرے نمبر پر جبکہ ایشیائی سطح پر رینکنگ میں ساتویں پوزیشن پر ہے، انہوں نے کہا کہ اگر حکومت اس کھیل کی سرپرستی کرے تو اس میں مزید رزلٹ سامنے آسکتے ہیں ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اگر بیس بال کے کھیل پر شفاف انداز میں کام کیا جائے تو یہ کھیل ملک میں عروج پر جاسکتا ہے اور ضرورت اس امر کی ہے کہ حکومت اس کھیل پر زیادہ سے زیادہ توجہ دے۔

اور کھلاڑیوں کو سہولت فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ فیڈریشن کو پہلے کی طرح گرانٹ دے۔ایک اور سوال کے جواب میں جمیل کامران نے کہا کہ حکومت گراس روٹ سطح پر تعلیمی اداروں سکول اور کالجز میں بیس بال کے مقابلوں کے انعقاد کو یقینی بنانے کے لئے ضروری اقدامات کرے تاکہ اس کھیل کو گراس روٹ سطح پر فروغ حاصل ہوسکے۔ کرونا وائرس کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ کرونا وائرس کی وباء نے اس وقت پاکستان سمیت پوری دنیا کو اپنی لپیٹ میں لیا ہوا ہے، کھلاڑیوں کو اس وباء سے نجات حاصل کرنے کے لئے احتتاطی تدابیر پر ضرور عمل کرنا ہوگا کیونکہ یہ ہی کھلاڑی ہمارا اثاثہ ہیں اور ان کھلاڑیوں نے ہی دنیا میں ملک و قوم کا نام روشن کرنا ہے، انہوں نے کہا کہ کھلاڑیوں کو گھروں میں رہ کر اپنی فزیکل فٹنس دینی ہوگی جس سے ان کی قوت مدافعت میں اضافہ ہوگا، انہوں نے کہا کہ ہماری اللہ تعالی سے دعا ہے کہ اللہ تعالی ہمیں اس وباء سے محفوظ رکھے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -