کورونا کے خلاف جنگ میں سندھ پولیس کا سب انسپکٹر زندگی کی بازی ہار گیا

کورونا کے خلاف جنگ میں سندھ پولیس کا سب انسپکٹر زندگی کی بازی ہار گیا
کورونا کے خلاف جنگ میں سندھ پولیس کا سب انسپکٹر زندگی کی بازی ہار گیا

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) کورونا وائرس کے خلاف جنگ میں سندھ پولیس کے سب انسپکٹر محمد حنیف زندگی کی بازی ہار گئے۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ کراچی کے علاقے ملیر میں تعینات سب انسپکٹر محمد حنیف کورونا وائرس کا شکار ہوکر شہید ہوگئے۔وفات سے قبل سب انسپکٹر حنیف کی جانب سے جناح ہسپتال میں بنائی گئی ویڈیو بھی سامنے آئی ہے، ویڈیو میں شہید سب انسپکٹر کو محکمے کے افسران سے داد رسی نہ ہونے کا شکوہ کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

شہید سب انسپکٹر محمد حنیف کے 24اپریل کو ریکارڈ کئے گئے ویڈیو بیان میں کہا گیا ہے کہ ٹیسٹ کرانے آیا ہوں کسی نے صبح سے نہیں پوچھا۔ ویلفیئر حکام سندھ پولیس کا کہنا ہے کہ سب انسپکٹر حنیف کا کورونا ٹیسٹ 7 مئی کو مثبت آیا تھا۔

ویلفیئرحکام نے کہا کہ جناح ہسپتال میں سب انسپکٹر حنیف نے کورونا ٹیسٹ کی غرض سے آنے کا نہیں بتایا تھا، شہید سب انسپکٹر نے جناح ہسپتال میں اپنی شناخت ظاہر نہیں کی تھی۔انہوں نے کہا کہ سب انسپکٹر حنیف عام مریض کی حیثیت سے جناح ہسپتال میں علاج کرانے پہنچا۔

ویلفیئر حکام کا کہنا تھا کہ سندھ بھر میں ضلعی سطح پر محکمے کے فوکل پرسن مقرر ہیں، سب انسپکٹر حنیف کا کیس علم میں آنے کے بعد محکمے نے مستقل داد رسی کی۔

جناح ہسپتال کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر سیمی جمالی کا اس بابت کہنا ہے کہ سب انسپکٹر محمد حنیف نام کا کوئی بندہ ہسپتال نہیں آیا۔سیمی جمالی نے کہا کہ ہسپتال میں کوئی پرائیویٹ ٹیسٹ نہیں ہوتا، سرکاری ٹیسٹ ہوتا ہے جس کا کوئی پیسہ نہیں لیا جاتا۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -کورونا وائرس -