چینی سکینڈل ، ٹویٹر صارف نے ایسی بات کہہ دی سینئر صحافی ’غصے ‘میں آ گئے ، آگے سے روف کلاسرا نے ایسا جواب دیدیا کہ کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا

چینی سکینڈل ، ٹویٹر صارف نے ایسی بات کہہ دی سینئر صحافی ’غصے ‘میں آ گئے ، آگے ...
چینی سکینڈل ، ٹویٹر صارف نے ایسی بات کہہ دی سینئر صحافی ’غصے ‘میں آ گئے ، آگے سے روف کلاسرا نے ایسا جواب دیدیا کہ کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم عمران خان کی ہدایت پر چینی بحران پر تحقیقات کی گئیں اور وعدے کے مطابق رپورٹ کو پبلک کیا گیا اور اس کے بعد یہ معاملہ نیا رخ اختیار کر گیا جس پر میڈیا سمیت دیگر فورمز پر بحث و مباحثہ جاری ہے ۔

تفصیلات کے مطابق شوگر سکینڈل کی تحقیقات کرنے والی تحقیقاتی ٹیم کے سامنے اسد عمر بھی پیش ہوئے اور انہوں نے اپنا بیان ریکارڈ کروایا اور اس معاملے کو لے کر روف کلاسر ا نے اپنا ویڈیو بلاگ شیئر کیا جس پر سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے کہیں داد دی گئی تو کہیں رؤف کلاسرا کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا تاہم ایک کمنٹ ایسا تھا جس پر سینئر صحافی بھی غصے میں آ گئے اور انہوں نے صارف کو کھری کھری سنا ڈالیں ۔

ٹویٹر صارف نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ ” حکومت کے مابین پھوٹ ڈالنے کی بھر پور کوشش کر رہے ہیں ، لگے رہو منا بھائی ، چہر ہ خوشی کے آنسوؤں سے بھر آیا ہے ۔“

رؤف کلاسرا نے صارف کے ٹویٹ پر جذباتی ہو گئے اور ری ٹویٹ کرتے ہوئے جواب دیا کہ ” شوگر مافیا نے خان صاحب کی مدد سے عوامی جیب سے سبسڈی کے نام پر تین ارب روپے ہڑپ کیے۔پھر چینی 17 روپے مہنگی کی اور 100ارب پھر عوامی جیب سے نکال لیے۔ آپ مجھ پر ہنستے رہیں۔حکمران اور ان کے ارب پتی دوست آپ لوگوں کو درست چونا لگاتے ہیں۔ آپ جیسی عوام حکمرانوں کو مل جائے تو وارے نیارے۔“

بات یہیں ختم نہیں ہوئی بلکہ رؤف کلاسرا نے ایک اور صارف کے ٹویٹ پر طنز سے بھرا ہوا جواب جاری کیا ، ناصر نامی صارف نے لکھا کہ ” دنیا کے اکثر ملکوں میں سبسڈی دی جاتی ہے ۔“جس پر سینئر صحافی نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ ” دنیا میں جن کو سبسڈی ملتی ہے وہ وزیراعظم کے دوست ہوتے ہیں اور کابینہ کے وزیر بھی ہوتے ہیں؟ اس ملک کے وزیر خود اقتصادی رابطہ کمیٹی اور کابینہ میں بیٹھ کر یہ بھی طے کرتے ہیں ہم نے کتنے ارب روپے اپنی کن شوگر ملوں کو دینی ہے؟خسرو بختیار کا بھائی پنجاب کا وزیرخزانہ اور بھائی کی مل کو 56 کروڑ دیے۔“

مزید :

قومی -