حکومت پارلیمان کو تباہ کرتی جارہی ہے۔۔۔سینیٹر شیری رحمان شہر یار آفریدی کے کشمیر کمیٹی کے چیئرمین منتخب ہونے پر پھٹ پڑیں

حکومت پارلیمان کو تباہ کرتی جارہی ہے۔۔۔سینیٹر شیری رحمان شہر یار آفریدی کے ...
حکومت پارلیمان کو تباہ کرتی جارہی ہے۔۔۔سینیٹر شیری رحمان شہر یار آفریدی کے کشمیر کمیٹی کے چیئرمین منتخب ہونے پر پھٹ پڑیں

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پارلیمانی کشمیر کمیٹی کے اجلاس میں حکومت نے وزیر مملکت شہریار خان آفریدی کو منتخب کر لیا ہے جس پر تمام اپوزیشن جماعتیں سراپا احتجاج ہیں،ایسے میں پاکستان پیپلز پارٹی نے شدید احتجاج کرتے ہوئےحکومت پرالزام عائدکیاہے کہ کشمیر کمیٹی سمیت پارلیمان کی تمام کمیٹیاں ہمارے لئےاہم ترین ہیں لیکن حکومت اتفاق رائے کے بغیرپارلیمان کو تباہ کرتی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پارلیمانی کشمیر کمیٹی کے اجلاس سے واک آؤٹ کے بعد سینیٹر شیری رحمان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پارلیمانی کمیٹیاں ہمارے لئے بہت اہمیت کی حامل ہوتی ہیں، ہر پارلیمانی روایت کو حکومت توڑ رہی ہے،مجبورا پارلیمانی کشمیر کمیٹی سے واک آؤٹ کرنا پڑا،کشمیر کمیٹی اہم ترین ہے لیکن حکومت پارلیمان کو تباہ کرتی جارہی ہے۔سینیٹر شیری رحمان نے کہا کہ حکومت چیئرمین کشمیر کمیٹی جیسے اہم ترین عہدے کے لئے اتفاق رائے پیدا نہیں کرسکی،مسلم لیگ ن، پیپلزپارٹی اور جے یو آئی نے مطالبہ کیا کہ چیئرمین کشمیر کمیٹی پر اتفاق پیدا کریں، کشمیر کمیٹی ہمیشہ حکومت کی صوابدید پر بنتی ہے لیکن اتفاق پیدا ہونا ضروری ہے،موجودہ حکومت پارلیمان کو اہمیت ہی نہیں دیتی، یہی کشمیر کمیٹی میں کیا گیا۔

مزید :

قومی -