دھند اور سموگ سے زندگی و کاروبار سسکیاں لینے لگے

دھند اور سموگ سے زندگی و کاروبار سسکیاں لینے لگے

  

اسلام آباد،لاہور،کراچی،کوئٹہ( مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں)دھنداور سموگ سے معمولات زندگی اورکاروبار سمیت فضائی وزمینی سفر مشکلات کا شکارہوگیا،اہم شاہرائیں ،ائیر پورٹ ،موٹرویز بند کردی گئیں ۔محکمہ موسمیات کاکہنا ہے کہ آج مختلف علاقوں میں آج بارش برسنے کاامکان ہے۔تفصیلات کے مطابق لاہور سمیت ملک بھر میں شدیددھند اور سموگ کے باعث ٹریفک کی روانی متاثرہونے سے موٹروے پر گاڑیوں کی قطاریں لگ گئیں اس کے علاوہ پروازوں اور ٹرینوں کا شیڈول بھی بری طرح متاثر ہو گیا جس کی وجہ سے اندرون اور بیرون ملک کئی پروازیں تاخیر کا شکار ہو گئیں اور بعض کو منسوخ کر دی گئی جبکہ دھند کی وجہ سے ٹرینیں بھی تاخیر کا شکار ہو گئیں۔شدیددھند اور سموگ کے باعث حدنگاہ میں بعض مقامات پر صفر ہو گئی ۔موٹر وے ایم ون اسلام آبادسے پشاوراوررشکئی،ایم ٹولاہورسے للہ انٹرچینج اورکوٹ مومن،ایم تھری پنڈی بھٹیاں سے فیصل آباد،ایم فور فیصل آبادسے گوجرہ تک مکمل بندہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق سموگ اور دھند کے باعث احمدپورشرقیہ،خان پور،صادق آباد،چیچہ وطنی،خانیوال اوربہاولپورمیں حد نگاہ صفرجبکہ لاہورسے اوکاڑہ،فیصل آباداورساہیوال میں 60میٹر،ملتان شہر اور گردونواح میں 50 میٹررہی ،چیچہ وطنی،پڈعیدن ،جہانیاں ،خانیوال، دنیاپور،بہاولپور،لودھراں،چنیوٹ،سرگودھا،فیصل آباد،جھنگ،لالیاں،بھوانہ اورچناب نگراورکمالیہ سمیت ضلع کے مختلف علاقوں میں دھند کا راج رہا۔ محکمہ موسمیات نے پاکستانیوں کیلئے نوید سناتے ہوئے بارشوں کی پیش گوئی کر دی جس سے سموگ ختم ہونے کا امکان ہے ۔ترجمان کے مطابق بلوچستان ،خیبرپختونخوا، فاٹا ، اسلام آباد، بالائی پنجاب(راولپنڈی، سرگودھا، گوجرانوالہ ، لاہور، فیصل آباد، ساہیوال ڈویڑن)، کشمیر، گلگت بلتستان میں کہیں کہیں گرج چمک کیساتھ بارش اور پہاڑوں پر برف باری جبکہ جنوبی پنجاب(ملتان، ڈی جی خان، بہاولپور ڈویڑن) میں چند مقامات پر بارش متوقع ہے جبکہ کراچی اور لاڑکانہ ڈویژن میں پیر سے بدھ کے درمیان بارش کا امکان ہے ۔جس سے شہری علاقوں میں چھائی ہوئی سموگ اگلے ہفتے بارش اور درجہ حرارت میں کمی کے باعث بتدریج ختم ہو جائیگی۔محکمہ موسمیات کے مطابق ملک کے دیگر علاقوں میں موسم خشک ر ہے گا، پنجاب کے میدانی علاقوں میں شدید دھند/سموگ جبکہ ڈی آئی خان، پشاور اورسکھر ڈویڑن میں رات اور صبح کے اوقات میں دھند پڑنے کا امکان ہے۔کوئٹہ،ڑوب، قلات، سبی، نصیرآباد میں کہیں کہیں جبکہ مکران ڈویڑن اور فاٹا میں چند مقامات پر گرج چمک کے ساتھ بارش اور پہاڑوں پر برفباری کا امکان ہے،محکمہ موسمیات کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم خشک ر ہا۔ جبکہ پنجاب کے میدانی علاقے شدید دھند تاہم سکھر، ڈی آئی خان اور پشاور ڈویڑن دھند کی لیپٹ میں رہے۔ ٹریفک پولیس کی جانب سے دوران ڈرائیونگ گاڑی کی رفتار کم رکھنے اور فوگ لائٹس کو استعمال کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔پی آئی اے ترجمان کے مطابق موسم کی غیر یقینی صورتحال کے باعث پی آئی اے اپنے شیڈول میں تبدیلی کر رہی ہے، پی آئی اے لاہور سے رحیم یار خان کی دو پروازیں منسوخ کردی گئیں، کراچی سے ملتان کی دو طرفہ پروازیں بھی خراب موسم کی نذر ہو گئیں ، پی آئی اے کی پرواز پی کے 718 مدینہ سے فیصل آباد کی بجائے مدینہ سے کراچی آئے گی، کویت سے لاہور کی پرواز اب کویت سے کراچی چلائی جائے گی، لاہورسے اسلام آباد کی دو طرفہ پروازیں 4 گھنٹے کی تاخیر سے چلائی جائیں گی، لاہور سے اسلام آباد پی کے 651 تین گھنٹے 30 منٹ کی تاخیر سے روانہ ہوگی۔دوسری طرف تفتان سمیت چار مختلف اضلاع میں موسم سرما کی پہلی بارش ہوگئی۔

دھند اور سموگ

ملتان،کامونکے،قصور ،ننکانہ صاحنب(مانیٹرنگ ڈیسک،نمائندگان) ملتان سمیت مختلف شہروں میں دھند اور سموگ کے باعث ٹریفک حادثات میں خاتون سمیت 7 افراد جاں بحق جبکہ درجنو ں زخمی ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق ملتان میں قادر پوراں بائی پاس پر موٹرسائیکل سڑک پار کرنے کی کوشش میں بس کے نیچے آ گیا جبکہ بس موٹر سائیکل کو بچاتے ہوئے الٹ گئی جس سے3 افراد زخمی اور گاڑی کو نقصان پہنچا،مقامی لوگوں نے اپنی مدد آپ کے تحت بس سے باہر نکالا اور زخمیوں کوطبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کیاجبکہ گوجرانوالہ میں دھند کے باعث رکشہ کامونکی ٹول پلازہ کی دیوار سے ٹکرا گیاجس کے نتیجے میں2 افراد جاں بحق ہو گئے،ادھرپھول نگرمیں بھی حادثے میں 2 افراد زندگی کی بازی ہار گئے،چینوٹ میں جھنگ روڈپر موٹر سائیکل سوارآئل ٹینکر کی زد میں آ گئی جس کے نتیجے میں خاتون جاں بحق جبکہ 3 افراد زخمی ہو گئے ،ریسکیو حکام کے مطابق چیچہ وطنی میں کمالیہ روڈپرٹریکٹرکی ٹکرسے موٹرسائیکل سوار3افرادزخمی ہو گئے۔گزشتہ صبح موٹر سائیکل رکشوں پر گجرات کاتیس سالہ ذیشان،پینتیس سالہ عمران،چھتیس سالہ ارسلان اور اٹھارہ سالہ قاسم داتا دربار سلام کرکے لاہور سے واپس جارہے تھے کہ ریس لگاتے ہوئے دونوں رکشے شدید سموگ اور دھند کے باعث چیانوالی ٹول پلازہ کی دیوار سے ٹکرا گئے جس کے نتیجہ میں محمد ارسلان اور قاسم سر میں شدید چوٹیں آنے کی وجہ سے موقع پر ہی دم توڑ گئے جبکہ ریسکیو1122نے ذیشان اور عمران کو تشویش ناک حالت کے پیش نظر ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال گوجرانوالہ منتقل کردیاہے۔پھولنگر کا رہائشی صابر علی اپنی موٹرسائیکل پر جا رہا تھا کہ جب وہ سرائے مغل کے نزدیک سندھواں کلاں کے قریب پہنچا تو آگے جانے والے ٹریکٹر سے ٹکراگیا جس کے نتیجہ میں موٹرسائیکل سوار صابر علی موقع پر ہی دم توڑ گیا ۔اسی طرح پھولنگر بائی پاس پرناواں کے نزدیک مشتاق احمد ڈرائیور اپنا ٹرک لے کر جا رہا تھا کہ پیچھے سے آنے والے نامعلوم کنٹینرڈرائیور نے اسے ٹکر مار دی جس کے نتیجہ میں ٹرک ڈرائیور محمد مشتاق زخمی ہو گیا جسے طبی امداد کے لیے ہسپتال لے جایا جا رہا تھا کہ وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے راستہ میں ہی دم تور گیا۔جبکہ پھولنگر ملتان روڈ جمبر کے نزدیک یکے بعد دیگر 20کے قریب گاڑیاں آپس میں ٹکرا گئیں جس کے نتیجہ میں نارووال کا رہائشی ذیشان موقع پر جاں بحق ہو گیا اور دیگر مسافر شدید زخمی ہوگئے جنہیں مختلف ہسپتالوں میں پہنچا دیا گیا ہے۔اوکاڑہ سے لاہور جانیوالی گاڑیاں شدید دھند کے باعث پرناواں بائی پاس کے قریب آپس میں ٹکراگئیں جس سے مزداڈالہ میں سوار ڈرائیور ذیشان جو کہ نارووال کا رہائشی بتایا جاتا ہے جاں بحق ہوگیا جبکہ دوسرے ڈالہ کاکنڈیکٹر نور محمدزخمی ہوگیاجنھیں ٹراما سینٹر منتقل کردیا گیاحادثے کے بعد ریسکیو اہلکاروں نے امدادی کاروائی میں حصہ لیا۔مقامی پولیس کے مطابق مرنے والے کے ورثاء نے کسی قسم کی قانونی کاروائی نہیں کی۔حادثے کا شکار ہونیوالی گاڑیوں میں مسافر بس ،مزدا ڈالے شامل ہیں۔حادثے میں گاڑیوں کو شدید نقصان پہنچا۔

ٹریفک حادثات

مزید :

کراچی صفحہ اول -