اینٹی بائیوٹک ادویات بے اثر،سالانہ لاکھوں افرادموت کا شکار

اینٹی بائیوٹک ادویات بے اثر،سالانہ لاکھوں افرادموت کا شکار

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر )ضرورت سے زیادہ، کم یا غلط اینٹی بائیوٹک ادویات استعمال کرنے کے نتیجے میں مزاحمت بڑھنے کے باعث متعدد اینٹی بائیوٹک ادویات نے اپنا اثر کھودیاہے جس کے باعث ہر سال دنیا بھر میں لاکھوں افراد موت کے منہ میں جانے لگے ہیں ۔اس حوالے سے عالمی ادارہ صحت نے 13 سے19 نومبر انٹی بائیوٹک سے آگاہی کا ہفتہ منانے کا اعلان کردیا ہے جس کے تحت پیر سے ہفتہ بھر قومی ادارہ صحت سمیت ملک بھر میں واک، ہسپتالوں میں آگاہی سیمینارہوں گے۔عالمی ادارہ صحت نے تحقیقات اور رپورٹس کی روشنی میں خوفناک انکشاف کیاہے کہ ضرورت سے زیادہ، کم یا غلط اینٹی بائیوٹک ادویات استعمال کرنے کے نتیجے میں پاکستان سمیت دنیا بھر میں انٹی بائیوٹک ادویات کیخلاف مزاحمت بڑھنے لگی ہے جس سے مریضوں پر پہلی یا دوسری کے بجائے تیسری یا چوتھی جنریشن ادویات کا استعمال معمول بن گیا ۔پہلی جنریشن کی اینٹی بائیوٹک بے اثر ہو رہی ہیں ، ادھورے نسخے،زیادہ یا کم مقدار،ادویات کے استعمال کا لامحدود دورانیہ مزاحمت بڑھنے کی بڑی وجوہات ہیں ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -