خیبرپختونخوا میں بلدیاتی حکومت کے اڑ ھائی سال مکمل ہونے پر سرکاری رپورٹ،مقامی حکومتوں کوجاری43ارب میں سے 13ارب روپے خرچ ہوسکے

خیبرپختونخوا میں بلدیاتی حکومت کے اڑ ھائی سال مکمل ہونے پر سرکاری ...
خیبرپختونخوا میں بلدیاتی حکومت کے اڑ ھائی سال مکمل ہونے پر سرکاری رپورٹ،مقامی حکومتوں کوجاری43ارب میں سے 13ارب روپے خرچ ہوسکے

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن)خیبرپختونخوا میں بلدیاتی حکومت کے اڑ ھائی سال مکمل ہونے پر سرکاری رپورٹ کے مطابق مقامی حکومتوں کوجاری43ارب میں سے 13ارب روپے خرچ ہوسکے،رپورٹ میںصوبائی حکومت کا بلدیاتی نمائند وں کی ناکامی کااعتراف کیا ہے۔

خیبرپختونخوا میں بلدیاتی حکومت کے اڑ ھائی سال مکمل ہونے پر سرکاری رپورٹ کے مطابق مقامی حکومتوں کوجاری فنڈز کا استعمال سست روی کا شکار ہے،14اضلاع میں گزشتہ مالی سال کا بجٹ پاس نہیں ہوا،جبکہ 13ضلعی حکومتیں متعلقہ یونین کونسل سے بجٹ پاس نہ کراسکیں،جبکہ خیبرپختونخواکے 25اضلاع میں سے 10اضلاع بجٹ تیارنہ کرسکے۔

رپورٹ کے مطابق ضلع کونسلز کے ا ندرونی اختلافات کی وجہ سے بجٹ پاس نہ ہوسکا،جبکہ رواں مالی سال میں محکمہ خزانہ نے مقامی حکومتوں کوایک پائی بھی جاری نہیں کی۔

خیبر پختون خوا کی صوبائی حکومت کو بھیجی گئی ڈسٹرکٹ کونسلز کی بھیجی گئی رپورٹ نیبرہوڈکونسل،ولیج کونسل اور محکمہ بلدیات نے تیارکی۔

مزید :

پشاور -