ڈیرہ بکھا ‘ عباس نگر میں متعدد واٹرپلانٹس بند ‘ زہریلا پانی شہریوں کا مقدر

ڈیرہ بکھا ‘ عباس نگر میں متعدد واٹرپلانٹس بند ‘ زہریلا پانی شہریوں کا مقدر

  

ڈیرہ بکھا(نمائندہ پاکستان) ڈیرہ بکھا، عباسنگر میں لگائے گئے واٹر فلٹریشن پلانٹ بند ہوگئے۔ تفصیل کے مطابق ڈیرہ بکھا یونین کونسل اور عباسنگر یونین کونسل سے ملحقہ واٹر فلٹریشن پلانٹ جو گزشتہ دور حکومت میں عوام کو صاف پانی فراہم کرنے کی غرض سے لگائے گئے تھے تبدیلی کی دعوئے داروں(بقیہ نمبر49صفحہ12پر )

نے اتے ہی عوام سے صاف پانی کی سہولت بھی چھین لی ان فلٹریشن پلانٹس کو مستقل طور پر بند کرکے تالے لگا دیے گئے ہیں جبکہ ان علاقوں کا پانی انتہائی مضر صحت ہے فلٹریشن پلانٹس بند ہونے کی وجہ سے عوام گندا اور آلودہ پانی پینے پر مجبور ہیں جن سے علاقہ میں موذی امراض پھیل چکے ہیں لوگ گردوں،پھپڑوں سمیت پیٹ کی بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں اب گسٹرو جیسی مہلک بیماری نے علاقہ میں ڈیرے ڈال دیے ہیں بچوں میں گسٹرو کی بیماری وبائی شکل اختیار کر چکی ہے جس پر اہل علاقہ ضیاء4 مرتضیٰ،غلام مصطفیٰ،عبدللطیف،فیاض شاہ،صفت اللہ،منیر احمد،شفیق جٹ، چوہدری،علیم بابر،چوہدری رشید،ریحان خالد،اشفاق مسیح،افتخار بھٹی،اشرف بھٹی نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت نے عوام سے صاف پانی کی سہولت بھی چھین لی واٹر فلٹریشن پلانٹس کو بند کرنا سمجھ سے بالاتر ہے ۔جس میں شہریوں نے انتظامیہ کیخلاف شدید احتجاج کیا ہے ۔

ازہریلا پانی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -