وہوا شہر کی تمام رابطہ سڑکیں کھنڈر ‘ سفر ناممکن ‘ حادثات میں اضافہ

وہوا شہر کی تمام رابطہ سڑکیں کھنڈر ‘ سفر ناممکن ‘ حادثات میں اضافہ

  

وہوا(نمائندہ پاکستان) وہوا شہر کو دربھی، جت شمالی، دنڑ، اندر کوٹ، بستی سنیاسی، درکانی ، صابو خیل، ڈگر والی ، مٹھوان ، مسلم آباد، قدرت آباد ،نتکانی، کوتانی، لکھانی، کوہر ، مندھریں، لتڑہ، روڈہ ٹبہ، جھوک بودو، کوٹ قیصرانی سے ملانے والی رابطہ سڑکیں انتہائی خستہ ہوچکی ہیں مکینوں محمد ریاض (بقیہ نمبر51صفحہ12پر )

قیصرانی، بشیر احمد لغاری، محمد ساجد، محمد آصف نے بتایا کہ وہوا تا کوٹ قیصرانی روڈ پر جگہ جگہ سڑکوں کے کناروں سے مٹی بہہ جانے کے سبب کئی جگہوں سے پختہ سڑک بارش کے پانی میں بہہ چکی ہے اور ان سڑکوں پر کراسنگ کرناانتہائی خطرناک ہوچکا ہے کئی مرتبہ کراسنگ کرتے ہوئے کئی موٹر سائیکل ، سائیکل سوار گر کر شدید زخمی ہوچکے ہیں ملک اللہ نواز ارائیں، خالد محمود بکھائی، نذیر احمد، محمد مشتاق نے بتایا کہ وہوا تا ڈگر والی ، نتکانی، کالج روڈ بھی کئی جگہوں سے انتہائی خطرناک صورتحال اختیار کرچکا ہے اس سڑک پر ڈگری کالج کے قریب واقع پل پر گڑھے پڑ چکے ہیں جس میں کئی مرتبہ کالج آنے والے طلباء گر کر زخمی ہوچکے ہیں جبکہ نتکانی تا وہوا روڈ پر واقع پل کے اطراف میں جنگلے نہ ہونے سے اس پل سے گزرنا انتہائی خطرناک ہوچکا ہے انہوں نے کہا کہ پلوں میں ہونے والے شگاف فوری پر کرکے پلوں پر جنگلے نہ لگائے گئے تو کوئی بھی بڑا حادثہ رونما ہوسکتا ہے محمد عامر، عبدالحنیف، ماما ممدو خان قیصرانی نے بتایا کہ شہر کو نواحی قصبات سے ملانے والی تمام سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں ان سڑکوں پر بارش کے دنوں میں کیچڑ ہوجانے کے باعث صورتحال مزید پیچیدہ ہوجاتی ہے جگہ جگہ پڑ جانے والے گڑھے موت کے گڑھوں کی شکل اختیار کرچکے ہیں ان سڑکوں پر چلنے والی ٹرانسپورٹ کھٹارہ ہوچکی ہیں اور ان پر سفر کرنا محال ہوچکا ہے ایمرجنسی کی صورت میں نواحی قصبوں کے مریض ہسپتال پہنچنے سے قبل ہی ان سڑکوں سے گزرتے ہوئے تڑپ تڑپ کر جان سے ہاتھ دھوبیٹھتے ہیں نے بتایا کہ سڑکوں کی مرمتی کے لیے بارہا یہاں کے مکینوں نے حکام بالاء کو درخواستیں دیں اور ان کی توجہ اس اہم مسئلہ کی جانب مبذول کرائی مگر کوئی شنوائی نہ ہوسکی انہوں نے رابطہ سڑکوں کو فوری مرمت کرکے ان کی بحالی کا مطالبہ کیا۔

حادثات میں اضافہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -