”جو کھلاڑی ٹیم میں ہوتے ہیں وہ ڈراپ ہونے والے کھلاڑیوں کو۔۔۔“ مایہ ناز سابق سپنر نے ایسا انکشاف کر دیا کہ آپ کو بھی بے حد افسوس ہو گا

”جو کھلاڑی ٹیم میں ہوتے ہیں وہ ڈراپ ہونے والے کھلاڑیوں کو۔۔۔“ مایہ ناز سابق ...
”جو کھلاڑی ٹیم میں ہوتے ہیں وہ ڈراپ ہونے والے کھلاڑیوں کو۔۔۔“ مایہ ناز سابق سپنر نے ایسا انکشاف کر دیا کہ آپ کو بھی بے حد افسوس ہو گا

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق لیگ سپنر عبدالرحمان کا کہنا ہے کہ یہ حقیقت ہے کہ سب چڑھتے سورج کے پجاری ہیں، جو کھلاڑی ٹیم سے ڈراپ ہو جاتا ہے، اس سے ٹیم والے کھلاڑی ویسے ہی ملنا پسند نہیں کرتے۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے عبدالرحمان نے کہا کہ قومی ٹیم کا کلچر اس بات کی اجازت نہیں دیتا کہ وہ ایسے کھلاڑیوں سے ملیں جنہیں ٹیم سے ڈراپ کر دیا گیا ہوں اور وہ جہاں ہوتے ہیں، صرف وہاں کے لوگوں کیساتھ ہی رہنا اور گفتگو کرنا ان کی مجبوری بن جاتا ہے۔ انہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہو ئے کہا کہ کھلاڑیوں کی آزادی نہیں چھیننا چاہیے، یہ کھلاڑی کا حق ہونا چاہیے کہ وہ کس سے ملتا ہے، کس کے ساتھ کھانا کھانے جاتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ قومی ٹیم کے کوچز بڑے ڈیمانڈنگ ہوتے ہیں، وہ چاہتے ہیں کہ کھلاڑی ان کی مرضی سے چلیں، حتیٰ کہ وہ اس بات سے بھی ناخوش ہوتے ہیں کہ جن کھلاڑیوں کو وہ پسند نہیں کرتے ان سے بات بھی نہ کی جائے۔

مزید :

کھیل -