تیمرگرہ میں انجینئرز کا 18نومبر سے قلم چھوڑ ہڑتال اور سٹرکوں پر آنے کا فیصلہ

تیمرگرہ میں انجینئرز کا 18نومبر سے قلم چھوڑ ہڑتال اور سٹرکوں پر آنے کا فیصلہ

  



تیمرگرہ (بیورورپورٹ)مطا لبات کی عدم منظوری پا کستان بھر کے سب انجنئیرز ایسوسی ایشن(سیوا)نے18نومبر سے ملک بھر میں قلم چھوڑ ہڑتال اور سڑکوں پر نکل آنے کی ڈیڈ لائن دیدی سب انجنئیرز ویلفئیرایسوسی ایشن پاکستان (سیوا)کے صدر ملک بشیر آحمد خان نے اپنے ایک جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ سب انجینئرز برادری نے اپنی مطالبات کے لئے 28ستمبر سے سرپا احتجاج اور 4نومبر سے آج بدھ13نومبرتک دھرنا دیتے ہوئے(سیوا)پنجاب کے صوبائی صدر عا مر ندیم کی قیادت میں لا ہور سیکرٹریٹ میں دھرنا بٹیھے ہوئے ہیں لیکن احتجاج او ردھرنے کے کئی روز گزرنے کے با وجود حکومت کی کانوں پر جو تک نہیں رینگتی اورکسی حکومتی نمائندے نے احتجاج کے حوالے سے ان کے ساتھ مذا کرات کئے اور نہ مطا لبات حل کرا نے کی کوئی یقین دھانی کرائی جس سے سب انجنئیرز برادری میں بے چینی اور احساس محرومی کی لہر دوڑ گئی ہے ملک بشیر آحمد خان نے کہا کہ کہ سب ا نجنئیرز برادری ملک کی تعمیر وترقی اور عوامی خو شحالی میں ریڑھ کی ہڈی کی حثیت رکھتا ہے لیکن سرکاری ملازمین میں سب انجنئیر زواحد مظلوم اور نظر انداز طبقہ ہے جو ملک کے قیام کی 71سال گزرنے کے با وجود سروس سٹریکچراپ گریڈیشن، اور ٹیکنیکل الاونس جیسے بنیا دی حقوق سے محروم ہیں ملک بشیر احمد نے حکومت کو پانچ دن کی ڈیڈ لائن دیتے ہوئے خبر دارکیا ہے کہ اگر ان کے جائز پیش کر دہ چارٹر آف ڈیمانڈ تسلیم نہ کئے گئے تو 18نومبر سے ملک کے پانچوں صوبوں پنجاب، خیبر پختون خواہ، سندھ، بلوچستان، اور گلگت بلتستان، میں ہر قسم سرکاری ترقیاتی منصوبوں کی بائکاٹ اور تمام سب انجنئیرز کو دفاتر سے سڑکوں پرنکال ائینگے انھوں نے سیوا کے تمام صوبائی صدور کو ہدا یات جاری کئیں کہ وہ اپنے صوبوں میں 18شروع ہونے والی دھرنوں کی کال کا انتظار کریں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر