قبائلی علاقوں کے بچوں کیلئے دانش سکولوں میں کوٹہ مختص کرنیکا فیصلہ

  قبائلی علاقوں کے بچوں کیلئے دانش سکولوں میں کوٹہ مختص کرنیکا فیصلہ

  



ڈیرہ غازیخان (نمائندہ خصوصی):وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان احمد خان بزدارنے راجن پوراورڈیرہ غازی خان کے قبائلی علاقوں میں فروغ تعلیم کیلئے مثبت اقدام کرتے ہوئے قبائلی علاقوں کے طلباﺅطالبات کیلئے دانش سکولوں میں کوٹہ مختص کرنے کا فیصلہ کیا ہے وزیراعلیٰ عثما ن بزدارنے دانش سکولوں(بقیہ نمبر8صفحہ12پر )

میں راجن پور اورڈیرہ غازی خان کے قبائلی علاقوں کے26 ہونہار طلباﺅ طالبات کیلئے کوٹہ مختص کردیااور اس ضمن میں احکامات جاری کردیئے۔وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان احمد خان بزدار نے ایک بیان میں کہا ہے کہ راجن پور اورڈیرہ غازی خان کے قبائلی علاقوں کے طلباءو طالبات کوبھی جدیدتعلیم کے زیور سے آراستہ کریں گے انہوں نے کہا کہ معیاری تعلیم پر پنجاب کے پسماندہ علاقوں کے بچوں کا بھی اتنا ہی حق ہے جتنا اشرافیہ کے بچوں کا۔انہوں نے کہاکہ ہماری حکومت دوردراز علاقوں کے بچوں کو یہ حق واپس دے گی۔وزیر اعلی سردار عثمان احمد خان بزدار نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کی حکومت صوبہ بھر میں تعلیم کے فروغ کیلئے مصروف عمل ہے۔انہوں نے کہاکہ پنجاب کے پسماندہ علاقوں میں نئی یونیورسٹیاں اورکالجز بنائے جارہے ہیں۔اور100نئے ماڈل سکولوں کی تعمیراورآفٹرنون سکولز پروگرام جاری ہیں۔پنجاب حکومت ایک سال میں تعلیم کے شعبہ میں متعدد اصلاحات متعارف کرواچکی ہے اوران اصلاحات کے انتہائی مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں سردار عثمان بزدار نے کہاکہ صوبے میں پہلی بار اساتذہ کے تبادلوں کیلئے ای ٹرانسفرسسٹم کی پالیسی پر کامیابی سے عمل کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہا کہ ڈیرہ غازی خان میں میر چاکر خان رند ٹیکنالوجی یونیورسٹی میں اس سال داخلوں کا آغاز بھی ہوچکا ہے۔

دانش سکول

مزید : ملتان صفحہ آخر