لہسن، ادرک، ٹماٹر 400، مٹر 200، آلو 150پیاز 100روپے فی کلو ہوگیا

لہسن، ادرک، ٹماٹر 400، مٹر 200، آلو 150پیاز 100روپے فی کلو ہوگیا

  



لاہور،اسلام آباد (لیڈی رپورٹر،آئی این پی)محکمہ صنعت وتجارت کے ترجمان کے مطابق صوبے بھر میں اشیاء ضروریہ کی قیمتوں کی مانیٹرنگ کے لئے پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کے چھاپے جاری ہیں۔ترجمان نے بتایا کہ گزشتہ روز صوبے بھر میں پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نے قیمتوں کی مانیٹرنگ کے لئے7ہزار 613دکانوں پر چھاپے مارے۔گرانفروشی کے حوالے سے 1213 خلاف ورزیاں سامنے آئیں۔44مقدمات درج ہوئے، 41 افراد گرفتار اور 24لاکھ49ہزار 600 روپے جرمانے کئے گئے۔علاوہ ازیں ملک بھر میں سبزیوں کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ہوگیا ہے۔ اسلام آباد میں ٹماٹر کی 300روپے،آلو150 اورپیاز100روپے فی کلو فروخت، وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کی مارکیٹوں میں بھی سبزیوں کی قیمت کو پر لگ گئے ہیں جہاں ٹماٹر فی کلو 270سے 300روپے، آلو 120 سے 150روپے اورپیاز100روپے فی کلو میں فروخت ہو رہے ہیں۔دوسری جانب کراچی میں بھی شہری سبزیوں کی ہوشربا قیمتوں سے پریشان ہیں جہاں ٹماٹر 260سے 300روپے فی کلو تک فروخت ہورہے ہیں جبکہ پیاز 80روپے فی کلو اور آلو 50 روپے فی کلو فروخت ہورہے ہیں۔روز مرہ کھانے میں استعمال کی جانے والی سبزی ادرک اور لہسن کی قیمتیں بھی آسمان سے باتیں کر رہی ہیں، ادرک اورلہسن 200سے 400روپے فی کلو میں فروخت ہورہاہے۔ کوئٹہ میں بھی ٹماٹر160سے 200روپے فی کلو میں فروخت ہورہا ہے جب کہ پیاز 80، آلو 40سے 50روپے فی کلو،لہسن اورادرک 400روپے، مٹر200روپے، شملہ مرچ 160روپے اوربھنڈی 120روپے فی کلو فروخت کی جارہی ہے۔سبزی کی بڑھتی قیمتوں کے حوالے سے عوام کا کہنا ہے کہ مارکیٹ اور بازار میں سبزیوں کے ریٹس مختلف ہیں، عوام نے حکومت سے مطالبہ بھی کیا ہے سبزیوں کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کو کنٹرول کیا جائے۔

قیمتیں،چھاپے

مزید : علاقائی