جامعات نئے علم کی تخلیق میں اہم کردار ادا کریں،پروفیسر سلمان سید

جامعات نئے علم کی تخلیق میں اہم کردار ادا کریں،پروفیسر سلمان سید

  



لاہور (لیڈی رپورٹر) برطانیہ کی یونیورسٹی آف لیڈز کے معروف سوشل سائنٹسٹ پروفیسر ڈاکٹر سلمان سید نے کہا ہے کہ اعلیٰ تعلیم کے نظام کو نو آبادیاتی اثرات سے پاک کرنے پر پاکستانی یونیورسٹیاں اعلی تعلیم کا محض صارف بننے کی بجائے نئے علم کی تخلیق میں اہم کردار ادا کریں گی وہ پنجاب یونیورسٹی انسٹی ٹیوٹ آف سوشل اینڈ کلچرل سٹڈیز کے زیر اہتمام اعلی تعلیم کو نوآبادیاتی اثرات سے پاک کرنے اور درپیش چلینجز کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کر رہے تھے۔ تقریب میں ڈین فیکلٹی آف علوم اسلامیہ پروفیسر ڈاکٹر حماد لکھوی، ڈائریکٹر انسٹی ٹیوٹ آف سوشل اینڈ کلچرل سٹڈیز پروفیسرڈاکٹر روبینہ ذاکر، پروفیسر ڈاکٹر عمر عبداللہ، لیڈز یونیورسٹی سے ڈاکٹر یاسمین حسین اور فیکلٹی ممبران نے شرکت کی۔

پروفیسر ڈاکٹر سلمان سید نے کہا کہ دنیا بھر میں اعلیٰ تعلیم کے نظام میں اہم تبدیلیاں آ رہی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ دنیا کے شمال میں قائم یونیورسٹیاں مقامی اور خطے کی معاشی ترقی اور معاشرتی مسائل حل کرنے میں اہم کردار ادا کر رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دنیا کے جنوب میں واقع یونیورسٹیاں ہائر ایجوکیشن کے نوآبادیاتی نظام کے زیر اثر ہونے کے باعث مطلوبہ نتائج فراہم نہیں کر پا رہیں۔ انہوں نے کہا کہ اعلیٰ تعلیم کے نظام کو نو آبادیاتی نظام کے اثرات سے چھٹکارا دلانے سے مقامی سطح کے مسائل حل ہوں گے

مزید : میٹروپولیٹن 1