ایک ہندو نے اپنے آٹھ ماہ کے کمسن بیٹے کو کالی ماتا کے قدموں میں قربان کر دیا

ایک ہندو نے اپنے آٹھ ماہ کے کمسن بیٹے کو کالی ماتا کے قدموں میں قربان کر دیا
ایک ہندو نے اپنے آٹھ ماہ کے کمسن بیٹے کو کالی ماتا کے قدموں میں قربان کر دیا

  


لندن (بیور ورپورٹ)  انڈیا میں ایک شخص نے اپنے آٹھ ماہ کے بچے کو کالی ماتا المعروف درگہ کے مندر میں لے جا کر اسکے قدموں میں رکھ کر قتل کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق اتر پردیش کے گاﺅں نارائن پوریا میں ایک شخص راج کمار نے گزشتہ روز اپنے آٹھ ماہ کے کمسن بچے کو نہلا دھلا کر صاف ستھرے کپڑے پہنائے گھر سے کلہاڑی اٹھائی اور اسے قریب ہی واقع ایک مندر میں لے گیا اور اسے کالی ماتا المعروف درگہ کے قدموں میں رکھ کر اسکی گردن پر کلہاڑی کے پے در پے وار کر کے اسکی گردن تن سے جدا کر دی اور موت کے گھاٹ اتار دیا راج کمار کی بیوی نے پولیس کو بتایا کہ اس کے ہاں کوئی اولاد نہ تھی بھگوان نے اسے بڑی دیر بعد بیٹا دیا تو اسکے خاوند نے یہ منت مانگ رکھی تھی کہ جب اسکا بیٹا آٹھ ماہ کا ہو جائیگا تو وہ اسکی قربانی دیگا اسکا موقف ہے کہ اسے خواب میں کالی ماتا نے اسکا حکم دے رکھا تھا لیکن وہ اسے مذاق سمجھتی رہی اسکا خاوند اپنے بیٹے سے بڑا پیار کرتا تھا مگر گزشتہ روز اس نے انتہائی سفا کانہ طریقے سے کالی ماتا کے قدموں میں اپنے بیٹے کو رکھ کر کلہاڑی کے ساتھ اسکی گردن تن سے جدا کر دی پولیس نے راج کمار کو گرفتار کر لیا ہے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...