ناموس رسالت ؐ قانون میں ممکنہ ترمیم ،ملتان سمیت مختلف شہروں میں مظاہرے ، ریلیاں

ناموس رسالت ؐ قانون میں ممکنہ ترمیم ،ملتان سمیت مختلف شہروں میں مظاہرے ، ...

ملتان،وہاڑی(سٹی رپورٹر،بیورو رپورٹ ، نمائندہ خصوصی) تحریک تحفظ نا موس رسالتؐ کا اجلاس ’’دارالسلام ‘‘دفتر جماعت اسلامی کلمہ چوک میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں امیر جماعت اسلامی ملتان میاں آصف محمود اخوانی، سیکر ٹری تحریک تحفظ نا موس رسالت محمد ایوب مغل،علامہ عبدالحق مجاہد، (بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

علامہ خالد محمود ندیم، بشارت عباس قریشی، ظفر اقبال پنیا، ظفر قریشی ایڈووکیٹ، عبدالرحمن حیدری نے شرکت کی۔ اجلاس میں ملعونہ آسیہ کو سیشن کورٹ کی جانب سے دس سال قبل دی گئی سزائے موت پر ملعونہ آسیہ جو کہ توہین رسالت کی مرتکب ہوئی اس نے پولیس افسران اور سیشن کورٹ میں اپنے اس گستاخانہ عمل کا اقرار کیا کہ ہاں میں نے نبی کریم ؐکی شان میں گستاخانہ کلمے کہے تھے جس پر سیشن کورٹ نے سزائے موت دی کئی سال گزرنے کے بعد سزائے موت کے فیصلے پر عمل درآمد نہیں کیا گیااور اب یہ افواہیں کہ ملعونہ آسیہ کو رہا کروانے کی کوشش کی جا رہی ہے اجلاس میں کہا گیا کہ گستاخ رسول ملعونہ آسیہ کو رہا کرنے اور کروانے والے بھی نبی کریم ؐ کی شان میں گستاخی کے مرتکب سمجھے جائیں گے ۔اسی طرح سینیٹ کے اندر نا موس رسالتؐکے حوالے سے بنائے گئے قانون295-C میں کسی قسم کی ترمیم کی کوشش کرنے والے اور کروانے والے گستاخان رسول ؐ کے سہولت کار تصور ہوں گے اور ہم یہ سمجھتے ہیں کہ نا موس رسالت ؐ کے قانون میں ترمیم کرنے والے گستاخ رسول ملعونہ آسیہ کو سزا سے بچانے کی کوشش کرنے والے کس طرح روز قیامت نبی اکرؐم کا سامنے کریں گے ۔ جب گستاخان رسول ؐ کو قانون کے مطابق سزا نہیں دی جاتی تب ہی ہر دور میں عاشق رسول غازی علم الدین اور ممتاز قادری پیدا ہوتے ہیں۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ عنقریب تمام دینی جماعتوں ، تاجروں، وکلاء برادری، طلب علم رہنماؤں کا ایک اجلاس منعقد کیا جائے گا جس میں آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔جمعیت اسلا م ضلع ملتا ن کے زیراہتماممو لا نا حبیب الرحما ن اکبر کی قیادت میں مو جو دہ حکو مت کی جا نب سے نا مو س رسا لت ؐ قا نو ن میں ترمیم کی متو قع کو شش اور ختم نبو ت قا نو ن میں مجو زہ تر میم کے خلا ف احتجاجی مظا ہر ہ کیا گیا مظا ہر ین سے خطا ب کر تے ہو ئے جے ، یو، آئی ملتا ن کے سنئیر رہنما مو لا نہ حبیب الر حمن اکبر نے کہا نا مو س رسا لت کے قا نو ن میں تر میم ایک عا لمی ایجنڈہ ہے اگر حکو مت نے تر میم کی کو شش کی تو بھیا نک نتا ئج سا منے آئیں گے جمعیت علما ء اسلا م کسی صو رت میں اس قا نو ن میں تر میم نہیں ہو نے دے گی ۔اگر کسی نے یہ مذموم حر کت کی تو جے یو آئی پا رلیمنٹ کے اندر اور با ہر بھر پور مذمت کرے گی ۔جے یو آئی کے رہنما زاہد مقصود قر یشی نے خطا ب کرتے ہوئے کہا کہ قوم کسی صورت میں مغربی تہذیب وثقا فت کو قبول نہیں کر تی جمعیت علماء اسلا م ملکی واسلا می تشخص کی ہر صورت میں حفا ظت کرے گی جمعیت علما ء اسلا م کے رہنما مو لانا ڈا کٹر عتیق الرحمن نے کہا کہ نا موس رسالت امت مسلمہ کا متفقہ مسئلہ ہے اسے اگر نہ چھیٹرا جا ئے تو ملک تر قی کی راہ پر گا مزن ہو سکتا ہے کیونکہ اصل تبدیلی حضور علیہ السلام سے محبت اور آپکی تعلیما ت پر عمل کر نے سے آئے گی مو جو دہ حکو مت تبدیلی کا نعرہ لگا ہ کر قوم کا ایما ن بھی تبدیل کر نا چا ہتی ہے اس مو قع پر جے یو آئی کے سنئیر رہنما مو لا نا ایا ز الحق قاسمی ، حبیب اﷲخا ن بابر ، محمد جمال خا ن، حمادحیدر عثمانی ، پر وفیسر مشتا ق احمد ، قاری محمد عبداﷲ، عبید اﷲبھٹی ، کفا یت بہا ر نا صر مو ہا نی ، قاری اسلم ، اختر ،قا ری ضرار ، علی ڈوگر ، سلیم اکبر ، عبید الرحمن ، قاری غلا م یا مین ، محمود غو ری ودیگر شریک ہیں ۔ تحریک لبیک پاکستان ملتان کے زیراہتمام تحفظ ناموس رسالت ؐ ریلی شاہ رکن عالم کالونی سے پریس کل تک نکالی گئی ریلی کی قیادت تحریک لبیک پاکستان کے ڈویژنل امیر ملتان صاجزادہ علامہ محمد مجاہد اسمائیل رضوی نے کی ریلی کے موقع پر شرکاء نے ملعونہ آسیہ مسیح کو رہا کرنے کی بجائے پھانسی دینے کا مطالبہ کیا جبکہ اس موقع پر ضلعی امیر رانا اصغر ادری، چوہدری زاہد حمید گجر، علامہ عبد الطیف مہروی، چوہدری اعجاز گھمن، فقیر محمد افضل نقشبندی نے کی اس موقع پر علامہ محمد مجاہد اسمائیل رضوی نے کہا کہ گستاخ رسول ؐ آسیہ ملعونہ کو رہا کرنے کی بجائے پھانسی کی سزا دے کر 295سی پر عمل کرکے حکومت وعدلیہ عاشقان رسول ؐ کو اس بات کا یقین دلائے کہ ملک پاکستان میں آئین کی پاسداری ہے ایسے ملعونوں کو عبرت کا نشان بنایا جائے تاکہ آئندہ کوئی نبی کریم ؐ کی شان میں گستاخی نہ کرے احتجاجی مظاہرے میں محمد ایوب مغل،سکندر حیات بھٹی، مخدوم ایاز جمالی، راحیل شہزاد اعوان، علی ہانس، زبیر سیفی، حافظ شاہد اسلام، محمد بلال ودیگر نے بھی شرکت کی ۔ملعونہ آسیہ مسیح کی ممکنہ رہائی کے خلاف تحریک لبیک ضلع وہاڑی کے زیر اہتمام احتجاجی ریلی نکالی گئی اور پریس کلب کے باہر مظاہرہ کیا گیا۔۔ احتجاجی ریلی ضلعی آفس مسجد انوار ضا پیپلز کالونی سے نکالی گئی جس پرریلی کی قیادت امیر جنوبی پنجاب سید فضل رسول شاہ اور پیر محمد مراد شاہ نے کی اورریلی میں پیر محمد اشرف خالد سیفی، پیر محمد اسماعیل، محمد یوسف رضا بریلوی، محمد اعجاز رضوی، راؤ دلاور عطاری، ملک شاہ نواز کھوکھر، محمد اشرف، محمد حسین صابری سمیت سینکڑوں کا رکنان اور سول سوسائٹی کے افراد نے شرکت کی۔ جب ریلی پریس کلب کے سامنے پہنچی تو اس موقع پر امیر تحریک لبیک یا رسول پاکستان جنوبی پنجاب پیر سید فضل رسول شاہ اور پیر محمد مراد شاہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت پاکستان ملعونہ آسیہ مسیح کو رہا کرنے کی بجائے سرعام پھانسی پر لٹکائیاگر ملعونہ آسیہ مسیح کو رہا کیا گیا تو عاشقان رسول اپنی جانوں کی پرواہ نہیں کریں گے اور ہر قسم کی قربانی دینے کیلئے تیار ہیں حکومت ہوش کے ناخن لیں اگر ملعونہ آسیہ کو رہا کیا گیا تو حکومت کی اینٹ سے اینٹ بجا دیں گے، اس موقع پر شدید نعرہ بازی کی گئی۔

ناموس رسالت قانون

مزید : ملتان صفحہ آخر