دیوانی کے نئے رولز 3 اضلاع میں نافذ کرنے کیلئے اجلاس طلب

دیوانی کے نئے رولز 3 اضلاع میں نافذ کرنے کیلئے اجلاس طلب

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے ضابطہ دیوانی کے تبدیل شدہ نئے رولز کو پنجاب کے تین اضلاع میں نافذ کرنے کے لئے اجلاس طلب کرلیا۔جسٹس امین الدین خان کی سربراہی میں اجلاس آج 13اکتوبر کومنعقد ہو گا۔پنجاب کے تین اضلاع جہلم،قصور اور مظفرگڑھ کی ماڈل عدالتوں میں نافذکرنے کے حوالے سے لاہور ہائیکورٹ کی رولز کمیٹی کے ہونے والے اجلاس میں کمیٹی کے دیگر ممبران جسٹس شاہد کریم، جسٹس شمس محمود مرزا، سینئر قانون دان میاں ظفر اقبال کلانوری اورصوبائی وزیر قانون راجہ بشارت بھی شریک ہوں گے،اجلاس میں ان تین اضلاع نئے رولز کے نفاذ کے طریقہ کار کو یقینی بنانے کے علاوہ حتمی تاریخ طے کی جائے گی،کمیٹی کے ممبرمیاں ظفر اقبال کلانوری نے کہا ہے کہ1908ء سے آج تک ضابطہ دیوانی کے رولز میں تبدیلی نہیں کی گئی،چیف جسٹس پاکستان کی ہدائت پر پہلی مرتبہ پرانے رولز کو موجودہ تقاضوں کے مطابق ڈھالا گیا،رولز میں تبدیلی کا مقصد انصاف کی فوری فراہمی ہے، انہوں نے طریقہ کار کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ نئے رولز کے تحت ایشو فریم ہونے تک کسی بھی مقدمے کو دوسرے جج کے پاس ٹرانسفر نہیں کیا جاسکے گا،ایشو فریم ہونے کے بعد کیس کی سماعت روزانہ کی بنیاد پر کی جائے گی، مقدمے کی باضابطہ سماعت کے موقع پر دونوں فریقین کو مصالحت کا ایک موقع دیا جائے گا،فوجداری نوعیت کے تصفیہ طلب مقدمات کوترمیمی رولز میں شامل رکھا گیا ہے۔

مزید : علاقائی