مردان میں خسرہ سے بچاؤ کی مہم 15 اکتوبر سے شروع ہوگی

مردان میں خسرہ سے بچاؤ کی مہم 15 اکتوبر سے شروع ہوگی

مردان (بیورورپورٹ)خسرہ سے بچاؤ کے لئے حفاظتی ٹیکوں کا قومی مہم15 اکتوبر سے 27 تک چلائے جائے گی والدین نو ماہ سے پانچ سال تک کے بچوں کو خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے ضرور لگائیں تاکہ ہمارے بچے اس خطرناک بیماری سے محفوظ رہ سکیں ۔یہ بات ای پی آئی کوارڈینیٹرمردان ڈاکٹر عمران علی خان اور پبلک ہیلتھ ایکسپرٹ ڈاکٹر ہدایت الرحمان نے ریڈیو پختونخوا ایف ایم 92.6 MHz مردان کے پروگرام پختونخوا کلینک میں انسداد خسرہ مہم کے حوالے سے خصوصی پروگرام میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا ۔ڈاکٹر عمران علی خان نے کہا کہ خسرہ ایک خطرناک وائرس سے پھیلتا ہے جس کی علامات میں بخار ، ناک سے پانی بہنا ، خشک کھانسی شامل ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ بچوں کو روٹین ای پی آئی میں خسرے کا ٹیکہ لگایا جاتا ہے ان میں خسرہ کی علامات کمزور ہوتی ہیں تاہم ٹیکہ نہ لگانے والے بچوں کے لیے یہ بیماری خطرناک ثابت ہوسکتی ہے اس لیے ہمیں اس موقع سے فائدہ اُٹھاتے ہوئے اس مہم کے دوران اپنے بچوں کو ویکسین کے ٹیکے ضرور لگا نے چاہیئے۔ڈاکٹر ہدایت الرحمان نے کہا کہ علامات ظاہر ہونے پر بچوں کو فوری طور پر مستند داکٹر کو دکھانا چاہیئے اور اپنے بچوں کو حفاظتی ٹیکے اور ویکسین ضرور دینی چاہیئے تاکہ وہ دس مختلف بیماریوں سے محفوظ رہ سکیں ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر