صوبائی وزیر قانون نے چارسدہ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں خسرہ سے بچاؤ مہم کا افتتاح کیا

صوبائی وزیر قانون نے چارسدہ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں خسرہ سے بچاؤ مہم کا افتتاح ...

شبقدر (نمائندہ خصوصی )چارسدہ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں خسرہ سے بچاؤ مہم کا افتتاح صوبائی وزیر قانون سلطان محمد خان ایڈوکیٹ نے کیا ۔ اس موقع پر صوبائی وزیر نے کہا کہ خسرہ سے بچاؤ مہم میں محکمہ صحت کے ساتھ تمام شہریوں کو اپنا اہم کردار ادا کرتے وہئے اس مہم کو کامیاب بنا نا چاہیے ۔ انہوں نے کہا کہ خسرے کی بیماری سے ہر سال ملک میں ہزاروں بچے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں ۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ صحت مند معاشرے کے قیام کیلئے ہر شہری کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا تاکہ ہماری آنے والے نسلوں کی ان خطرناک بیماریوں بچایا جا سکیں ۔ اس موقع پر خسرہ سے بچاؤ مہم کی آگاہی اور عوام میں شعور کی بیداری کیلئے ایک وآک کا اہتمام بھی کیا گیا جس میں صوبائی وزیر قانون سلطان محمد خان ، محکمہ صحت کے اہلکاروں اور بڑی تعداد میں عام شہریوں نے بھی حصہ لیا ۔ اس موقع پر ڈسٹرکٹ ہیلتھ افیسر نیک نواز خان ، ای پی آئی کوارڈینٹر ڈاکٹر فیروز شاہ اور پی ای آئی کے فوکل پرسن ڈاکٹر محمد عارف نے کہا کہ ضلع چارسدہ میں 15اکتوبر سے 26اکتوبر تک خسرہ سے بچاؤ مہم جاری رہے گا ۔ جس میں 9ماہ سے پانچ سال تک کے بچوں کو خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے لگائے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ضلع چارسدہ میں 2لاکھ 43ہزار بچوں کو خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے لگانے کیلئے 222ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں ۔ جو ضلع کے تمام صحت کے مراکز اور تمام دیہات میں گھر گھر خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے بچوں کو لگائیں گے ۔ محکمہ صحت کے حکام نے مزید بتایا کہ مہم کو کامیاب بنانے کیلئے علماء ، منتخب نمائندگان اور سوشل تنظیموں کے خدمات کو بھی حاصل کیا گیا ہیں ۔ تاکہ ضلع بھر میں کوئی بچہ خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے سے محروم نہ رہ سکیں ۔ انہوں اس موقع پر عام شہریوں سے اپیل کی کہ خسرہ سے بچاؤ مہم میں محکمہ صحت کے اہلکاروں کے ساتھ بڑھ چڑھ کر حصہ لیں اور اس مہم کو کامیاب بنائیں۔

چارسدہ(بیورو رپورٹ) صوبائی وزیر قانون سلطان محمد خان نے صوبہ بھر میں پیر کے دن سے شروع ہونے والے خسرہ مہم کو کامیاب بنانے کے لئے والدین سمیت ہر مکتبہ فکر سے مہم کو کامیاب بنانے کی اپیل کی ہے ،اس حوالے سے گزشتہ روز ایک خسرہ مہم کے افتتاح کے حوالے سے ایک تقریب کا انعقاد کیا گیا جس میں ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر نیک نواز سمیت کام نیٹ آفیسر سریراللہ خان اور محکمہ صحت کے دوسرے عملے نے شرکت کی اس موقع پر صوبائی وزیر قانون کی نگرانی میں ایک بچے کو خسرہ سے بچاؤں کا ٹیکہ لگا کر باقاعدہ طور پر خسرہ مہم کا افتتاح کر دیا گیا جبکہ عوام میں خسرہ مہم کے حوالے سے آگاہی واک کا بھی انعقاد کیا گیا ،ا س موقع پر صوبائی وزیر قانو ن بیرسٹر سطان محمد خان نے اپنے پیغام میں صوبے کے عوام سے خسرہ مہم کو کامیاب بنانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ سال 2017میں خسرہ نے وبائی شکل احتیار کر لی تھی جس کی وجہ سے ہزاروں کی تعداد میں بچے متاثر ہوئی تھے جبکہ بعض اوقات شدت احتیار کرنے کی صورت میں خسرہ بیماری جان لیو ا ثابت ہو سکتی ہے ،اس لئے ہم نے صوبہ بھر میں نو ماہ سے لیکر 5سال تک کے بچوں کے لئے پیر کے دن سے صوبہ بھر میں خفاظتی ٹیکوں کی خصوصی مہم شرو ع کی ہے جس میں بچوں کو خسرہ سمیت پولیو سے بچاؤں کے ویکسین بھی پلائے جائینگے ۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ترقی یافتہ ممالک میں بچوں کی ویکسینیشن کی شرخ ہر سال 95فی صد سے زیادہ ہوتی ہے لیکن پاکستان میں یہ شرخ بدقسمتی سے 50فی صد سے بھی کم ہے جس کی وجہ سے مختلف قسم کی بیماریاں ہمارے بچوں پر حملہ کر دیتی ہے جس سے ہر سال لاکھوں کی تعداد میں بچے متاثر جبکہ ہزاروں کی تعداد میں موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں ،اس لئے ہمیں دوسرے والدین کو اپنے بچوں کی تربیت پر توجہ دینے سمیت ان کے صحت پر بھی توجہ دینی چاہئے اور والدین سمیت ہر مکتبہ فکر سے تعلقرکھنے والے شخصیات کو خسرہ مہم کو کامیاب بنانے میں ہمارے ساتھ مکمل تعاون کرنا چاہئے تاکہ کوئی بھی بچہ خسرہ اور پولیو کے ویکسین سے محروم نہ رہ جائے اور ہر صورت اس صوبے سمیت اس ملک سے ان بیماریوں کے حاتمہ کو یقینی بنایا جائے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول