عدالتی حکم کے باوجودپیش نہ ہونے پر ڈی جی نیپرا کے وارنٹ گرفتاری جاری

  عدالتی حکم کے باوجودپیش نہ ہونے پر ڈی جی نیپرا کے وارنٹ گرفتاری جاری

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت نے عدالتی حکم کے باوجودپیش نہ ہونے پر ڈی جی نیپرا انصاف علی شاہ کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے ہیں۔احتساب عدالت میں پولیس نے 8ارب مالیت کی مبینہ کرپشن کیس میں ڈی جی نیپرا انصاف علی شاہ ضمانت کے بعد گزشتہ روز عدالت میں پیش نہیں ہوئے جس پر عدالت نے ان کے وارنٹ گرفتاری جاری کردیئے ہیں، عدالت میں ملزم کی طرف سے حاضری معافی کی درخواست دائر کی گئی جو عدالت نے مسترد کردی، واضح رہے کہ انصاف علی شاہ کی عدالت عالیہ نے ضمانت منظور کی تھی اور گزشتہ روز انصاف علی نے پہلی بار عدالت میں پیش ہونا تھا لیکن وہ پیش نہیں ہوئے، جس پر عدالت نے برہمی کا اظہارکرتے ہوئے مذکورہ بالاحکم جاری کردیاہے، اس کیس کی مزیدسماعت 2نومبر کوہوگی۔علاوہ ازیں احتساب عدالت نے نندی پور کیس میں محمد اسلم باغ کے جوڈیشل ریمانڈ میں 24اکتوبر تک توسیع کردی، عدالت کو دوسرے ملزم قیصر عباس کے بارے میں بتایا گیا کہ وہ جیل میں دل کا دورہ پڑنے پر انتقال کرگیا ہے جس کی وجہ سے اس کو پیش نہیں کیا گیا،عدالت میں اس کیس کے دیگر ملزمان پلی بارکنگ کرکے رہا ہوچکے ہیں نندی پور کا مرکزی ملزم عمر فاروق فرار ہو چکا ہے،اس کیس میں رانا مہتاب سمیت 34ملزمان کو نامزد کررکھا ہے،ملزمان پر الزام ہے کہ انہوں نے نندی پور پاور پلانٹ سے 145آئل ٹینکرغائب کردیئے تھے۔

مزید :

علاقائی -