آٹوانڈسڑی کا بحران بر قرار ستمبر میں کاروں کی فروخت 39فیصد کم

آٹوانڈسڑی کا بحران بر قرار ستمبر میں کاروں کی فروخت 39فیصد کم

  

 کراچی(این این آئی)آٹوانڈسٹری کی مشکلات میں کوئی کمی نہیں آسکی ہے، ستمبر2019 میں کاروں کی فروخت میں 39 فیصد کمی ریکارڈکی گئی، اس ماہ 11724 کاریں فروخت ہوئیں جبکہ اسی عرصے میں گذشتہ سال 19345 گاڑیاں فروخت ہوئی تھیں۔پاکستان آٹوموٹومینوفیکچرز ایسوسی ایشن(پاما)کے دیئے گئے اعدادو شمار کے مطابق آٹوانڈسٹری کوبحرانی صورتحال سے نکالنے کے لئے کوئی مناسب اقدامات نہیں کئے گئے، ستمبر میں بھی اس انڈسٹری کی تباہ ہوتی ہوئی صورت حال کی عکاسی کر رہا ہے۔ رواں مالی سال 2019-20کی پہلی سہ ماہی میں گاڑیوں کی فروخت میں 41 فیصد کمی ریکارڈکی گئی ہے جس کے مطابق(جولائی تا ستمبر)38308 گاڑیاں فروخت ہوئیں جب کہ گذشتہ سال کے اسی عرصے میں 58351 گاڑیاں فروخت ہوئیں۔

اس کے باوجود ستمبر میں اگست کے مقابلے میں گاڑیوں کی سیل 16فیصد اضافہ ہوا۔ بڑھتی ہوئی پیداواری لاگت کی اس بحرانی صورتحال پرقابو پانے کیلئے تین بڑے مینوفیکچرز نے اپنے پیداواری ایام میں بھی کمی کر دی ہے۔ہونڈا اٹلس کمپنی کی سیل میں سالانہ 68 فیصد، انڈس موٹرزکی سیل میں 57 فیصد، سوزوکی موٹرزکی سیل میں 18فیصدکمی واقع ہوئی ہے۔

مزید :

کامرس -رائے -