پاک چین تعاون خطے کی رابطہ کاری میں مددگار ثابت ہوگا، سلیم مانڈوی والا

  پاک چین تعاون خطے کی رابطہ کاری میں مددگار ثابت ہوگا، سلیم مانڈوی والا

  

استنبول (این این آئی)ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا نے کہاہے کہ امن و سلامتی کی چھتری تلے خطے کی رابطہ کاری کے خواب کو شرمندہ تعبیر کیا جا سکتا ہے،دہشتگردی ایک بہت بڑا مسئلہ ہے،دہشتگردی کا تعلق کسی قومیت یا مذھب سے نہیں، مودی سرکار مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی میں ملوث ہے، سی پیک پاکستان اور چین کے باہمی اعتماد اور دوستی کا مظہر ہے،پاک چین تعاون خطے کی رابطہ کاری میں مددگار ثابت ہو گا۔ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا کا ترکی کے شہر استنبول میں سپیکر کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ کانفرنس کا موضوع دہشتگردی کی روک تھام اور علاقائی رابطہ کاری کا فروغ ہے۔ انہوں نے کہاکہ تجارتی و کاروباری سرگرمیوں کے ذریعے خطے کی خوشحالی کے لئے اقدامات اٹھا سکتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پائیدار ترقی اور مسائل کے حل کے لئے فورم کو زیادہ با اختیار بنانا ہوگا۔ ڈپٹی چیرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا نے کہاکہ امن و سلامتی کی چھتری تلے خطے کی رابطہ کاری کے خواب کو شرمندہ تعبیر کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہاکہ دہشتگردی ایک بہت بڑا مسئلہ ہے،دہشتگردی کا تعلق کسی قومیت یا مذھب سے نہیں۔ ڈپٹی چیرمین سینیٹ نے کہاکہ پاکستان خود دہشتگردی کا شکار رہا،پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں فرنٹ لائن سٹیٹ کا کردار ادا کیا۔ انہوں نے کہاکہ ستر ہزار سے زائد افراد شہید، اربوں ڈالر کا نقصان ہوا،ہمارا عزم پختہ ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان نے پارلیمان، حکومتی اور عدالتی سطح پر اقدامات اٹھائے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان کی پارلیمان نے موثر قانون سازی کی ہے، دنیا کو دہرا معیار ترک کرنا ہوگا۔ ڈپٹی چیرمین سینیٹ نے کہاکہ مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشت گردی کے تحت حق کی آواز کو کچلا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ مودی سرکار مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی میں ملوث ہے۔ انہوں نے کہاکہ مقبوضہ وادی میں لوگوں کو ظلم کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ قومیں باہمی اعتماد اور تعاون سے آگے بڑھتی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مودی نے پر امن ڈائیلاگ کی تمام افرز ٹھکرا دیں۔ انہوں نے کہاکہ سی ہیک پاکستان اور چین کے باہمی اعتماد اور دوستی کا مظہر ہے،پاک چین تعاون خطے کی رابطہ کاری میں مددگار ثابت ہو گا۔

سلیم مانڈوی والا

مزید :

صفحہ آخر -