کینیا کے ایتھلیٹ نے میراتھن ریس میں تاریخ رقم کر دی، 42.2 کلومیٹر کا فاصلہ کتنے وقت میں طے کیا؟ جان کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں

کینیا کے ایتھلیٹ نے میراتھن ریس میں تاریخ رقم کر دی، 42.2 کلومیٹر کا فاصلہ کتنے ...
کینیا کے ایتھلیٹ نے میراتھن ریس میں تاریخ رقم کر دی، 42.2 کلومیٹر کا فاصلہ کتنے وقت میں طے کیا؟ جان کر آپ کی آنکھیں بھی کھلی کی کھلی رہ جائیں

  



ویانا (ڈیلی پاکستان آن لائن) کینیا کے ایتھلیٹ ایلیڈ کپچوگی نے 42.2 کلومیٹر لمبی میراتھن ریس کو انسانی تاریخ میں پہلی بار2گھنٹے سے کم وقت میں مکمل کر کے تاریخ رقم کر دی ہے۔ 34 سالہ کپچوگی نے یہ کارنامہ آسٹریا کے دارالحکومت ویانا میں انجام دیا اور صرف ایک گھنٹے 59 منٹ اور 40سیکنڈز میں ریس مکمل کر لی۔

تفصیلات کے مطابق یہ پہلا موقع ہے کہ کسی انسان نے 42.2 کلومیٹرکا فاصلہ 2گھنٹے سے کم وقت میں طے کیا،البتہ کیپچوگی کے اس کارنامے کو میراتھن کا ریکارڈ تسلیم نہیں کیا جائے گا کیونکہ یہ کھلا مقابلہ نہیں تھا،اس میں کیپچوگی نے رفتار کو برقرار رکھنے کے لیے کئی ایتھلیٹ گروپس کا استعمال کیا۔

ریس کے بعد کپچوگی نے اپنے کارنامے کا انسان کے چاند پرپہنچنے سے تقابل کرتے ہوئے کہا کہ میں نے بھی ایسی ہی تاریخ رقم کی جیسے برطانوی ایتھلیٹ سر راجر بینسٹر نے 1954 میں منٹ سے کم وقت میں ایک میل کا فاصلہ طے کر کے کیا تھا۔انہوں نے کہا کہ میری کارکردگی یہ ظاہر کرتی ہے کہ کسی انسان کی کوئی حد نہیں ہے، آج میں نے ایساکیا میں امید کرتا ہوں میرے بعد اور بھی ایتھلیٹس یہ کارنامہ انجام دیںگے۔

واضح رہے کہ ایلیڈ کیپچوگی میراتھن ریس کے اولمپک چیمپئن بھی ہیں جنہوں نے 2018ءمیں برلن میراتھن ریس 2 گھنٹے ایک منٹ اور39سیکنڈز میں طے کر کے ریکارڈ قائم کیا تھا، 2017ءمیں انہوں نے اٹلی میں 2 گھنٹے سے کم وقت میں میراتھن ریس کو مکمل کرنا چاہا تھا لیکن ناکام رہے تھے،ایلیڈ کیپچوگی 4بار لندن میراتھن ریس بھی جیت چکے ہیں۔

مزید : کھیل