پاکستان مسلم لیگ ن یو اے ای نے 12 اکتوبر کو یوم سیاہ منایا

پاکستان مسلم لیگ ن یو اے ای نے 12 اکتوبر کو یوم سیاہ منایا
پاکستان مسلم لیگ ن یو اے ای نے 12 اکتوبر کو یوم سیاہ منایا

  



دبئی (ویب ڈیسک) 12 اکتوبر 1999ءکو اس وقت کے جنرل پرویز مشرف نے اچھی بھلی کامیابی سے چلتی جمہوری حکومت پر شب خون مارا اور محمد نواز شریف کی حکومت ختم کردی جس سے جمہوریت کا قتل ہوا اور کامیابی کے زینے طے کرتی جمہوری حکومت کا گلا گھونٹ دیا گیا اور ملک میں مارشل لاءکے سائے پھیلادئیے گئے۔ مسلم لیگ ن کے ہر کارکن اور پاکستان کے غیور عوام کو یہ دن کبھی نہیں بھولے گا جس دن کے بنیادی حقوق غصب کرلئے گئے اور جمہوریت ختم کردی گئی۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات کے زیر اہتمام منعقدہ ایک تقریب میں کیا گیا۔

12 اکتوبر کو یوم سیاہ کی اس تقریب میں غلام مصطفی مغل، خواجہ عبدالوحید پال، چودھری ظفر اقبال، راجہ ابوبکر آفندی، ملک دوست محمد اعوان، سہیل عامر گھمن، شہزاد بٹ، جان قادر، چودھری رزاق، چودھری خالد بشیر، شیخ محمد امجد، وقاص، ندیم شاہ، عزیز الرحمن، احمد خان، محمد غوث قادری اور طاہر بھنڈر کے علاوہ دیگر متعدد لیگی کارکنوں نے شرکت کی۔ پی ایم ایل این کے متذکرہ عہدیداران نے تقریب کے دوران 12 اکتوبر 1999ءیوم سیاہ کے حوالے سے اپنے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت کے ڈکٹیٹر جنرل پرویز مشرف نے مسلم لیگ ن کی حکومت کو ختم کرکے جمہوریت پر شب خون مارا اور عوام الناس کے بنیادی حقوق صلب کرلئے۔ جمہوری حکومت کا خاتمہ کردیا گیا اور ملک پر مارشل لاءکا نفاذ کردیا گیا۔

لیگی مقررین نے کہا کہ اس امر کی جس قدر مذمت کی جائے وہ کم ہے۔ جب تک دنیا قائم ہے ہم یہ دن یوم سیاہ اور یوم مذمت کے طور پر مناتے رہیں گے۔ اس تقریب کے مہمان خصوصی پاکستان مسلم لیگ ن متحدہ عرب امارات اور پی ایم ایل این انٹرنیشنل کے چیف کوآرڈینیٹر ملک دوست محمد اعوان تھے۔ انہوں نے اپنی تقریر کے دوران نیا عہدہ ملنے پر چودھری نورالحسن تنویر، چودھری محمد الطاف، غلام مصطفی مغل اور خواجہ عبدالوحید پال کا شکریہ ادا کیا اور اس بات کا اعادہ کیا کہ وہ پی ایم ایل این کے لئے تن من دھن سے کام کریں گے۔ تقریب ہذا میں مسلم لیگ ن یو اے ای کے صدر چودھری محمد الطاف کو بھی مدعو کیا گیا تھا لیکن وہ بوجہ ناسازی طبیعت تقریب میں شرکت نہ کرسکے۔ تقریب کے آخر میں سہیل عامر گھمن نے تمام مہمانوں کا شکریہ ادا کیا۔

مزید : عرب دنیا