بھارت میں مجسٹریٹ پر جنسی زیادتی کا الزام لیکن راتوں رات اس لڑکی کیساتھ کیاسلوک کیا؟ انتہائی دلچسپ کہانی سامنے آگئی

بھارت میں مجسٹریٹ پر جنسی زیادتی کا الزام لیکن راتوں رات اس لڑکی کیساتھ ...
بھارت میں مجسٹریٹ پر جنسی زیادتی کا الزام لیکن راتوں رات اس لڑکی کیساتھ کیاسلوک کیا؟ انتہائی دلچسپ کہانی سامنے آگئی

  



نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک سب ڈویژنل مجسٹریٹ نے جیل سے بچنے کے لیے خود پر جنسی زیادتی کا الزام عائد کرنے والی لڑکی سے راتوں رات بیاہ رچا لیا۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق38سالہ مجسٹریٹ دنیش کمار کی اپنی بیوی کے ساتھ طلاق ہو چکی تھی جس کے بعد اس نے متاثرہ لڑکی کے تعلق استوار کر لیا جو چار سال تک قائم رہا۔ بعد ازاں اس کی پوسٹنگ دوسرے شہر ہو گئی اور اس نے اس لڑکی سے تعلق ختم کر لیا۔

گزشتہ دنوں وہ اپنے شہر واپس آیا تو لڑکی اس کے پاس پہنچ گئی۔ جب مجسٹریٹ صاحب نے تعلق بحال کرنے سے انکار کیا تو لڑکی وہاں سے سیدھی پولیس کے پاس چلی گئی اور اس کے خلاف ایف آئی آر درج کروا دی۔ اس نے پولیس کو بتایا کہ ”دنیش نے مجھ سے شادی کا وعدہ کر رکھا تھا اور اسی وعدے کی وجہ سے میں نے اس کے ساتھ جسمانی تعلق قائم کیا۔ ان چار سالوں میں میں دو بار حاملہ ہوئی اور دنیش نے مجھے اسقاط حمل پر مجبور کر دیا۔“ لڑکی کے ایف آئی آر درج کروانے پر پولیس حکام اور دیگر سینئر افسران نے مجسٹریٹ دنیش سے ملاقات کی اور اسے سمجھایا کہ وہ لڑکی سے شادی کرکے معاملہ رفع دفع کر دے جس پر وہ رضامند ہو گیا اور آدھی رات کو ایک مقامی مندر میںلڑکی کے ساتھ شادی کر لی۔

مزید : بین الاقوامی