’دنیا میں سب سے سکھی مسلمان بھارت میں ملے گا ‘ ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ایس کے سربراہ نے نیا شوشہ چھوڑ دیا

’دنیا میں سب سے سکھی مسلمان بھارت میں ملے گا ‘ ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ...
’دنیا میں سب سے سکھی مسلمان بھارت میں ملے گا ‘ ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ایس کے سربراہ نے نیا شوشہ چھوڑ دیا

  



نئی دلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) ہندو انتہا پسند تنظیم آر ایس ایس کے سربراہ موہن بھگوت نے دعویٰ کیا ہے کہ بھارت میں رہنے والے مسلمان سب سے زیادہ خوش ہیں۔ یہ دعویٰ کرنے سے پہلے وہ شاید بھارت میں ہجومی تشدد کا نشانہ بننے والوں سمیت آسام اور کشمیر کے مسلمانوں کو بھول گئے۔

بھارتی ریاست اڈیشہ میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آر ایس ایس کے سربراہ نے دعویٰ کیا کہ پوری دنیا میں سب سے خوش مسلمان بھارت میں ہیں ۔ ہندوستان میں تمام مذاہب کے پیروکار خوشی سے زندگی گزار رہے ہیں، ملک کی ترقی یقینی بنانے کیلئے اتحاد کی ضرورت ہے۔

موہن بھگوت کا کہنا تھا کہ ’یہودی پہلے مارے مارے پھرتے تھے لیکن صرف بھارت میں انہیں پناہ ملی، پارسیوں کو اپنی پوجا کی آزادی صرف بھارت میں ہے، دنیا میں سب سے سکھی مسلمان بھارت میں ملے گا ، یہ کیوں ہے؟ کیونکہ ہم ہندو ہیں۔‘

خیال رہے کہ آر ایس ایس بھارت کی ہندو انتہا پسند تنظیم ہے جو نہ صرف مہا بھارت کا خواب دیکھتی ہے بلکہ بھارت کو صرف ہندو مذہب کے ماننے والوں کا دیس قرار دیتی ہے۔ بھارت میں مسلمانوں کے خلاف پیش آنے والے واقعات میں ملوث اکثر افراد کا تعلق اسی ہندو انتہا پسند تنظیم سے ہوتا ہے۔

مزید : بین الاقوامی