آﺅٹ ہونے کا غصہ ، آسٹریلین ٹیم کے کپتان نے ڈریسنگ روم کی دیوار پر مکا مار کر اپنا ہاتھ توڑ لیا

آﺅٹ ہونے کا غصہ ، آسٹریلین ٹیم کے کپتان نے ڈریسنگ روم کی دیوار پر مکا مار کر ...
آﺅٹ ہونے کا غصہ ، آسٹریلین ٹیم کے کپتان نے ڈریسنگ روم کی دیوار پر مکا مار کر اپنا ہاتھ توڑ لیا

  



سڈنی (ڈیلی پاکستان آن لائن) آسٹریلیا کی قومی کرکٹ ٹیم میں بطور آل راﺅنڈر کھیلنے والے مچل مارش اس وقت اپنا ہاتھ تڑوا بیٹھے جب انہوں نے آﺅٹ ہونے پر غصے میں ڈریسنگ روم کی دیوار پر زور دار مکا مار دیا۔ وہ مقامی ٹورنامنٹ میں ویسٹرن آسٹریلیا کی ٹیم کی قیادت کر رہے تھے۔

آسٹریلین میڈیا کے مطابق اتوار کے روز ویسٹرن آسٹریلیا اور تسمانیہ کی ٹیم کے مابین شیفلڈ شیلڈ ٹورنامنٹ کے میچ کا آخری روز تھا۔ میچ کے دوران مچل مارش کو حریف باﺅلر جیکسن برڈ نے 53 کے سکور پر آﺅٹ کردیا جس پر ویسٹرن آسٹریلیا کے کپتان سخت غصے میں آگئے اور ڈریسنگ روم میں جا کر دیوار پر اتنی زور سے مکا ماردیا کہ اپنا ہاتھ ہی تڑوا بیٹھے۔

ویسٹرن آسٹریلیا کرکٹ ایسوسی ایشن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ مچل مارش نے دن کے شروع میں ڈریسنگ روم کی دیوار پر ہاتھ مارا جس کی وجہ سے ان کا ہاتھ زخمی ہوگیا ۔ ہاتھ پر چوٹ لگنے کے باعث وہ میچ سے باہر ہوگئے لیکن ان کی چوٹ کس نوعیت کی ہے اور وہ کب تک فٹ ہوں گے اس بارے میں اگلے ہفتے پتا چلے گا۔

ویسٹرن آسٹریلیا کا اگلا میچ جمعہ کو وکٹوریہ سے ہوگا اور زخمی ہونے کے باعث مچل مارش کی اس میچ میں شمولیت مشکوک ہوگئی ہے جبکہ اگلے مہینے پاکستان کے خلاف شروع ہونے والی سیریز میں بھی ان کے ٹیم میں جگہ بنانے کے امکانات محدود ہوگئے ہیں۔

خیال رہے کہ ویسٹرن آسٹریلیا اور تسمانیہ کے درمیان کھیلا گیا میچ برابری پر ختم ہوا۔ ویسٹرن آسٹریلیا نے پہلی اننگز میں 337 اور دوسری اننگز میں 9 وکٹوں کے نقصان پر 283 رن بنائے تھے۔مچل مارش نے دوسری اننگز میں نصف سنچری بنانے سے پہلے پہلی اننگز میں 41 رن بنائے تھے اور 2 وکٹیں بھی حاصل کی تھیں۔

مزید : کھیل