تازہ ترین اور پریشان کن خبر ہے کہ …………

تازہ ترین اور پریشان کن خبر ہے کہ …………
 تازہ ترین اور پریشان کن خبر ہے کہ …………

  

  پارے پارے دوستوں سنائیں کیسے ہیں؟ امید ہے کہ اچھے ہی ہونگے۔ جی ہاں دوستوں ہم بھی اچھیہی ہیں، جی ہاں دوستوں تازہ ترین اور پریشان کن خبر ہے کہ ملک بھر میں آٹے کا بحران پیدا ہو گیا جس کی وجہ سے عوام کوشدید مشکلات کا سامنا اٹھانا پڑ رہا ہے۔جی ہاں اور مزید یہ خبر بھی سامنے آئی ہے کہ تندور مالکان نے بھی روٹی کی قیمت میں اضافے کا فیصلہ کر لیا ہے،گزشتہ کچھ دن پہلے بھی ہم اس بات کی نشاندہی کر چکے ہیں کہ ملک بھر میں آٹے کا بحران پیدا ہو رہا ہے لیکن اتنی شدت اختیار کر جائیگا یہ بات کسی کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھی۔ ویسے یہ بات بھی حقیقت ہے کہ آٹاسب کی ضرورت ہے۔ مزدور ہو یا کسان، امیر ہو یا غریب، بچہ ہو یا بڑا، بزرگ ہو  یا جوان، مرد ہو یا عورت، غرض آٹا سب کی ضرورت ہے اور آٹے کے بغیر زندگی کا تصور بھی مشکل ہے۔ جی ہاں وہ اس لئے کہ آٹا ہی ہے جس سے گھر گھر روٹی پکتی ہے اور آٹے کی روٹی سب شوق سے کھاتے ہیں اور اسی لئے جب آٹے کا بحران پیدا ہوتا ہے تو عام آدمی کی مشکلات میں اضافہ ہوجاتا ہے۔

مزید یہ خبر بھی سننے کو ملی کہ یوٹلٹی سٹورز پر بھی آٹا نا پید ہو گیا، جی ہاں ملک بھر میں آٹے کی قلت و مہنگائی کی شکایت پر جناب وزیراعظم نے سخت ایکشن لے لیا۔ جی ہا ں تازہ تازہ خبر ہے کہ مہنگائی کی شکایت موصول ہونے پر جناب کپتان فوری حرکت میں آئے اور اشیائے خوردونوش کی قیمتیں جانچنے کا ہدف ٹائیگر فورس کے حوالے کر دیا گیا اور ان کو مہنگائی اور ذخیرہ اندوزوں پر بھی نظر رکھنے کے لئے کہا گیا ہے۔ مزید یہ کہ حکومت نے مہنگائی پر قابو پانے کے لئے پلان تیار کر لیا جبکہ خبر تھی کہ جناب وزیر اعظم ٹائیگر فورس کے رضا کاروں سے بھی ملاقات کریں گے۔ جی دوستوں اگر حکومت نے مہنگائی پر قابو پانے کا ارادہ کر لیا ہے تو خوش آئند بات ہے اور ہو سکتا ہے کہ پاکستانی عوام کو مہنگائی کے جن سے بھی نجات مل جائے اور اگر حکومت مہنگائی پر قابو پانے میں کامیاب ہو گئی اور مہنگائی بارے عوام کو ریلیف دے دیا تو یہ یقیناً حکومت کی بہت بڑی کامیابی  ہو گی۔ جی ہاں وہ اس لئے کہ فی الوقت پاکستانی عوام کو سب سے زیادہ پریشانی مہنگائی سے ہی ہے۔

پٹرول مہنگا، بجلی مہنگی، گیس مہنگی، آٹا مہنگا، چینی مہنگی، گھی مہنگا، مشروبات مہنگے، ادویات مہنگی اور نہ جانے کیا کچھ مہنگا نہیں ملتا ہمارے ملک میں۔ جی ہاں دوستوں اور سب سے بڑا مسئلہ مہنگائی کے ساتھ ساتھ غیر معیاری مصنوعات کی فروخت بھی ہے۔ بازار میں فروخت کے لئے پیش کی جانے والی اشیاء نہ صرف ناقص ہیں بلکہ مہنگی بھی فروخت ہو رہی ہے اور ہمارے بہت سے دوست کہہ رہے ہیں کہ اگر حکومت نے عوام کو مہنگائی سے نجات دلوانے کا ارادہ کر ہی لیا ہے تو ان غیر معیاری مصنوعات سے بھی عوام کو نجات دلوا دی جائے تو یہ بھی حکومت کا بہت بڑا احسان ہو گا پاکستانی عوام پر،وہ اس لئے کہ مہنگائی سے تو عوام صرف چیختی ہے لیکن دو نمبر اور غیر معیاری اشیاء کا استعمال کرنے سے جان بھی جا سکتی ہے۔ یقیناًانسان نما بھیڑئیے ہیں جو انسانوں کی جان سے کھیلتے ہیں تو ان کے خلاف بھی سخت کاروائی کر نا حکومت پر لازم ہے۔

بہر حال اب دیکھتے ہیں کہ حکومت واقعی عوام کو مہنگائی سے نجات دلوانے کے لئے سنجیدہ بھی ہے کہ نہیں اور آیا واقعی حکومت کی طرف سے مہنگائی میں کمی لائی جا سکے گی یا نہیں، یہ بات تو آنے والا وقت ہی بتا سکتا ہے۔ تو بہرحال آپ یہ سب جاننے کے لئے وقت کا انتظار کریں کہ واقعی حکومت مہنگائی پر قابو پا سکے گی یا نہیں، لیکن ہمیں دیں اجازت، ملتے ہیں آپ سے جلد ایک چھوٹی سی ننھی سی بریک کے بعد تو چلتے چلتے اللہ 

نگھبان رب راکھا

مزید :

رائے -کالم -