ہنگامہ آرائی کیس، راناثناء اللہ کی عبوری ضمانت کی درخواست پر سماعت ملتوی

ہنگامہ آرائی کیس، راناثناء اللہ کی عبوری ضمانت کی درخواست پر سماعت ملتوی

  

لاہور(نامہ نگار)انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج ارشدحسین بھٹہ نے نیب آفس پر حملہ اور ہنگامہ آرائی کیس میں ملوث مسلم لیگ (ن) کے رہنمارانا ثنااللہ کی عبوری ضمانت کی درخواست پرسماعت  15اکتوبرتک ملتوی کرتے ہوئے وکلاء کوحتمی بحث کیلئے طلب کرلیاہے عدالت نے عدالت میں بروقت چالان جمع نہ کرانے پرتفتیشی افسرکوبھی شوکاز نوٹس جاری کردیاہے،دوران سماعت فاضل جج نے راناثناء اللہ کے وکلاء کی جانب سے اس کیس کی تاریخ16اکتوبر کے جلسہ کے بعد رکھنے کی استدعا مسترد کرتے ہوئے قراردیا کہ دسمبر میں آپ نے دھرنا دینا ہے تو پھر اس کیس کو دسمبر کے بعد رکھ لوں؟ یہ باتیں قبل از وقت ہیں، میں نے کیس کے میرٹ پر فیصلہ کرنا ہے، پی آئی سی والا مسئلہ اس سے کم نہیں تھا، کیس کی سماعت شروع ہوئی تو مسلم لیگ ن پنجاب کے صدر رانا ثنااللہ عبوری ضمانت میں توسیع کے لئے اپنے وکیل سید فرہادعلی شاہ کے ہمراہ عدالت میں پیش ہوئے جبکہ اس کیس میں شریک ملزم کیپٹن (ر)محمدصفدر کی حاضری معافی کی درخواست عدالت میں پیش کی گئی جس میں بتایا گیا کہ وہ بیماری کے باعث عدالت میں پیش نہیں ہوسکتے، دوران سماعت پولیس نے تفتیش سے متعلق مکمل رپورٹ عدالت میں پیش کی،پولیس رپورٹ کے مطابق رانا ثنااللہ سمیت دیگر ملزمان تفتیش میں قصور وار پائے گئے ہیں، راناثناء اللہ کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ تاریخ دے دیں آئندہ سماعت پر بحث کر دیں گے،فاضل جج نے کہا کہ ڈیڑھ ماہ گزر گیا ہے ملزمان ضمانت پر ہیں  رانا ثناء اللہ کے وکلاء کی یہ استدعا مسترد کرتے ہوئے مزید سماعت کل 15اکتوبر تک ملتوی کردی۔

رانا ثناء اللہ کی عدالت میں پیشی کے موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے جبکہ پیشی کے موقع پر کارکنوں کی جانب سے رانا ثناء اللہ پرپھولوں کی پتیاں بھی نچھاور کی گئیں۔

مزید :

علاقائی -