گورنر کی مذاکرات کی پیشکش،ٹیچنگ سٹافیو ای ٹی کا ختر مقدم

گورنر کی مذاکرات کی پیشکش،ٹیچنگ سٹافیو ای ٹی کا ختر مقدم

  

 لاہور (پ ر)  ٹیچنگ سٹاف ایسوسی ایشن یوای ٹی نے گورنر پنجاب کی طرف سے مذاکرات کی پیش کش کا خیر مقدم کیا ہے۔ٹی ایس ے نے اپنے مطالبات کی منظوری کے لیے ”استاد کو عزت دو تحریک“  کے   تحت پنجاب اسمبلی کے سامنے 24 ا کتوبر کوحتجاج کا اعلان کررکھا ہے۔ یوای ٹی میں گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور نے میڈیا کے سوال کے جواب میں امید دلائی ہے کہ ہم یوای ٹی کے ساتذہ راہنماؤں سے مذاکرات کریں گے اور ا نکے مسائل بات چیت سے حل کرنے کی کوشش کریں گے۔ اس سلسلے میں ٹیچنگ سٹاف ایسوسی ایشن کا  اجلاس صدر ڈاکٹر فہیم گوہر اعوان کی صدارت میں منعقد ہوا۔ جس میں جنرل سیکرٹری ڈاکٹر تنویر قاسم،ٹریثرر ڈاکٹر مصطفی حبیب،ڈاکٹر اویس راشد نے  شرکت کی۔ڈاکٹر فہیم گوہر اعوان کا کہنا تھا کہ ٹی ایس اے گورنر کی ممنون ہے کہ انہوں نے میڈیا کے ساتھ گفتگو میں یوای ٹی اساتذہ کے مسائل بات چیت کے ذریعے حل کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔

اجلاس میں اس امر پر اتفاق کیا گیا کہ اساتذہ کی اولین ترجیح بات چیت سے مسائل کا حل ہے،ہمیں احتجاج کا کوئی شوق نہیں تاہم اگر مسائل حل نہ ہوئے تو احتجا ج کرنا ہمارا آئینی اور جمہوری حق ہے۔ ٹی ایس اے چاہتی ہے کہ یوای ٹی کے مالی بحران کا مستقل حل نکلے۔اس سلسلے میں ہمارا مطالبہ ہے کہ یوای ٹی کے ذمہ پنجاب حکومت کے واجب الادا ایک ارب روپے واپس ہونے چاہیے۔تیس کروڑ کی بطور قرض ادائیگی مسئلہ کا حل نہیں ہے۔یہ عارضی ریلیف ہے۔ہمارا مطالبہ ہے کہ پنجاب حکومت یوای  ٹی کو بحرا ن سے نکالنے کے لیے بیل آؤٹ پیکج دے۔دیگر محکمہ جات کی طرح یوای ٹی اساتذہ کو ٹیکنیکل الاؤنس دیا جائے۔ یوای ٹی کا گزشتہ دس سالوں کا فرانزک آڈٹ کرایا جائے۔یوای ٹی کے کنٹریکٹ اساتذہ کو مستقل کیا جائے۔ریشنلائزیشن پالیسی تبدیل کی جائے۔ایچ ای سی کے معیار پر پورے اترنے والے اساتذہ کی اگلے گریڈ میں ترقی دی جائے۔اور ٹائم سکیل پرومشن پالیسی کا یوای ٹی میں بھی اطلاق کیا جائے۔ ٹیکنیکل الاؤنس کے لیے وزیر اعلی کی قائم کردہ کمیٹی عملا غیر فعال ہے اس کمیٹی کو فعال کیا جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -