16 اکتوبر کا جلسہ عوامی ریفرنڈم  ثابت ہوگا، رانا ثناء اللہ 

   16 اکتوبر کا جلسہ عوامی ریفرنڈم  ثابت ہوگا، رانا ثناء اللہ 

  

لاہور(نامہ نگار، آئی این پی) مسلم لیگ (ن) کے رہنما رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ تمام جماعتوں کا متفقہ فیصلہ ہے کہ حکومت کو گھر بھیجا جائے، قیادت جب مناسب سمجھے گی استعفوں کا فیصلہ کریں گے کسی لوٹے کو برداشت نہیں کیا جائے گا کسی ایم این اے یا ایم پی اے میں جرات نہیں ہوگی قیادت کے فیصلے سے انحراف کرے انسداد دہشت گردی کی عدالت میں پیشی کے بعدمیڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنااللہ نے کہا کہ حکومت 16 اکتوبر کے جلسے پر نظر انداز ہونا چاہتی ہے 16 اکتوبر کو نااہل حکومت کے خلاف ریفرنڈم ہوگا،عدم اعتماد اور عوامی ریفرنڈم ملک کے ہر شہر میں ہوگا یہ جلسہ حکومت کی روانگی کے لئے پہلا قدم ثابت ہوگا،16 اکتوبر کا جلسہ ہر قیمت پر ہوگا سیاسی مقدمات بنائے جا رہے ہیں،اگر عوامی ریفرنڈم کو نہ مانا گیا تو عوام کا سیلاب اسلام آباد کی جانب ہوگا، آٹا 35 سے 80، چینی 50 سے 110 روپے کلو تک پہنچ چکی ہے انہوں نے مزید کہا کہ ادویات کی قیمت 6 گنا بڑھ چکی ہے،عام آدمی 2 وقت کی روٹی کو ترس رہا ہے  ترجمانوں کا ایک ٹولہ ہر گھنٹے کے بعد جھوٹ بولتا ہے،ہماری جدوجہد پاکستان میں صاف شفاف الیکشن کے لئے ہے،جب استعفیٰ آئیں گے تو یہ الیکشن نہیں کروا سکیں گے جب پی ڈی ایم استعفوں کا فیصلہ کرے گی تو سب اس پر عمل کریں گے،آج پراسیکیوشن چاہتی تھی کہ 16 سے پہلے فیصلہ ہوجائے،حکومت کے ہاتھ پاؤں پھول چکے ہیں،اگر کوئی کریک ڈاؤن یا طاقت کے ذریعے روکنے کی کوشش کرتی ہے تو ہم کامیاب ہوگئے۔

رانا ثناء اللہ 

مزید :

صفحہ آخر -