حکومتی سبز باغ کا ٹائی ٹینک مہنگائی کے سونامی میں غرق ہو رہا ہے:سراج الحق

  حکومتی سبز باغ کا ٹائی ٹینک مہنگائی کے سونامی میں غرق ہو رہا ہے:سراج الحق

  

 لاہور(نمائندہ خصوصی)امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ حکومتی ٹائی ٹینک مہنگائی کے سونامی میں غوطے کھا رہاہے، عوام کو ریلیف دینے کے سبز باغ دکھانے والوں نے غریب کو مہنگائی کے بھنور میں پھنسا دیا ہے،عوام کی فریادسننے والا کوئی نہیں، دن بدن مہنگائی کا گراف اوپر اور حکومت کا گراف نیچے جارہا ہے، وہ دن دور نہیں جب حکومت خود مہنگائی کے بوجھ تلے دب جائے گی، حکومت کو اندازہ ہی نہیں کہ عوام مہنگائی کے ہاتھوں کس قدر پریشان ہے، وزیراعظم مافیاز کے گھیرے کا اعتراف کرنے کے باوجود آج تک ان مافیاز کے خلاف کوئی قدم نہیں اٹھا سکے، آٹا، چینی، ڈرگ اور لینڈمافیاز مہنگائی کے اصل ذمہ دار ہیں، جو کام حکومتی مشینری کے کرنے والے ہیں وہ ٹائیگر فورس کو دے کر وزیراعظم خود ہی ملک میں افراتفری اور انتشار کو دعوت دے رہے ہیں، 13 فیصد عوام مہنگائی کی وجہ سے خط غربت سے نیچے چلے گئے ہیں۔مرکز اسلامی پشاور میں علماء و فضلاء کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے سراج الحق نے کہاکہ آئین کا تقاضا ہے کہ قرآن و سنت کی تعلیم کو عام کیا جائے اور ایسا ماحول فراہم کیا جائے جس میں وہ آسانی کے ساتھ اپنے دین پر عمل پیرا ہوکر قرآن و حدیث کے مطابق اپنی زندگی گزار سکیں۔پاکستان ایک نظریاتی ملک ہے اس کی شناخت کو قائم رکھنا اور نئی نسل کو اس کے مطابق پروان چڑھانا ہماری ذمہ داری ہے۔ مغربی این جی اوز محض ڈالرز کے حصول کے لیے پاکستان کے نظریاتی تشخص کو مٹانے پر تلی ہوئی ہیں۔

سراج الحق

مزید :

صفحہ آخر -