ٹائیگر فورس کے ذریعے مہنگائی کی چیکنگ سے خانہ جنگی کا خدشہ‘ افتخار خان

  ٹائیگر فورس کے ذریعے مہنگائی کی چیکنگ سے خانہ جنگی کا خدشہ‘ افتخار خان

  

 خان گڑھ(نمائندہ پاکستان) پیپلزپارٹی جنوبی پنجاب کے سیکرٹری انفارمیشن و رکن قومی اسمبلی نوابزادہ افتخار احمد خان نے اپنی رہائش گاہ " سیف نگر" خانگڑھ میں ایک پریس(بقیہ نمبر9صفحہ 6پر)

 کانفرنس میں کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان اپوزیشن کی طرف سے چلائی جانے والی تحریک سے بوکھلاہٹ کا شکار ہو گئے ہیں اور ان کے اوسان خطا ہو چکے ہیں حالانکہ یہ احتجاج ان کی طرف سے آئے روز مہنگائی میں اضافہ کی وجہ سے ہے جس میں عوام تنگ آ کر اس نااہل حکمرانوں کے خلاف اٹھ کھڑے ہیں انہوں نے کہا کہ ایکبار پھر مہنگائی کی لہر آ چکی ہے جس میں عوام کیلئے اب زندگی بسر کرنا اور گھر کا بجٹ بنانا مشکل ہو چکا ہے سبزیوں ' آٹا' چینی' مرغی کا گوشت' روٹی' ٹماٹر' انڈے سمیت اشیائے خوردونوش میں اضافہ کردیا ہے جبکہ حیران کن امر یہ ہے کہ وزیراعظم عمران خان مہنگائی پر نوٹس لے رہے اور ان کے نوٹس لینے پر عوام مزید پریشان ہو چکی ہے کیونکہ وزیراعظم اس سے قبل 11 بار نوٹس لے چکے ہیں نوٹس لینے کے بعد جان بچانے والی ادویات ' بجلی' گیس' پیٹرول و دیگر اشیاء  400 فیصد تک بڑھ چکی ہیں اور اب مہنگائی کے نوٹس لینے پر ملک بھر میں عوام میں بیچینی پائی جاتی ہے انہوں نے کہا کہ یوٹیلیٹی سٹورز پر 150 ارب سبسڈی دی گئی مگر حالت یہ ہے کہ یوٹیلیٹی سٹورز پر عوام کیلئے کچھ بھی نہیں اور وہ خالی ہاتھ مایوس لوٹ رہے ہیں اس 150ارب روپے سبسڈی کا حساب کون دے گا۔ نوابزادہ افتخار احمد خان نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ٹائیگر فورس کے ذریعے مہنگائی کی چیکنگ سے خانہ جنگی کی شروعات ہو گی جبکہ یہ عمل اداروں کی توہین ہوگا انہوں نیکہا کہ سرکاری ملازمین خصوصاً پنشنرز کی تنخواہوں میں اضافہ نہ کرنا ناانصافی ہے جس کی پیپلزپارٹی مذمت کرتی ہے انہوں نیکہا کہ وزیراعظم اور اس کی کابینہ نااہل اور نالائق ہے جبکہ عوام کی ترجمانی کرنے پر جیلوں کی دھمکیاں دینا اور عوام کی تذلیل کرنے والے وزیراعظم کا اب جانا ٹھہر چکا ہے حکومت کے خلاف عوامی تحریک کامیاب ہو گی جبکہ آئندہ وزیراعظم بلاول بھٹو زرداری ہوں گے جو ملک میں خوشحالی کے نئے دور کا آغاز کریں گے اور بھٹو شہید اور بی بی شہید کے مشن عوام کی خدمت کو مکمل کریں گے۔

افتخار خان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -