”حکومت دیگرممالک سے ملنے والے تحائف نہ بتاکرکیوں شرمندہ ہورہی ہے، اور ۔۔“ اسلام آبادہائیکورٹ کے توشہ خانہ کیس میں ریمارکس 

”حکومت دیگرممالک سے ملنے والے تحائف نہ بتاکرکیوں شرمندہ ہورہی ہے، اور ۔۔“ ...
”حکومت دیگرممالک سے ملنے والے تحائف نہ بتاکرکیوں شرمندہ ہورہی ہے، اور ۔۔“ اسلام آبادہائیکورٹ کے توشہ خانہ کیس میں ریمارکس 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )حکومت نے اسلام آباد ہائیکورٹ سے وزیراعظم عمران خان کو ملنے والے تحائف پر مہلت مانگ لی ، عدالت نے استدعا منظور کرتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی ۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ ہرتحفے کوپبلک کرنے پرپابندی کیوں؟کسی ملک نے ہارتحفے میں دیاتوپبلک کرنے میں کیاحرج ہے؟حکومت دیگرممالک سے ملنے والے تحائف نہ بتاکرکیوں شرمندہ ہورہی ہے؟حکمرانوں کو ملنے والے تحائف ان کے نہیں بلکہ عوام کے ہیں،عوامی عہدہ نہ ہوتوکیاعہدوں پربیٹھے لوگوں کوتحائف ملیں گے؟۔

عدالت کا کہناتھا کہ حکومت تمام تحائف کومیوزیم میں کیوں نہیں رکھتی؟حکومت کو چاہیے گزشتہ 10 سال کے تحائف پبلک کردے،حکومت یہ بھی بتائے کتنے تحائف کاایف بی آرسے تخمینہ لگوایا؟۔

مزید :

قومی -