شارجہ میں پاکستانی اور بنگلہ دیشی شہری مل کر ایسی چیز چراتے رنگے ہاتھوں پکڑے گئے کہ جان کر آپ کو بھی شرم آجائے گی

شارجہ میں پاکستانی اور بنگلہ دیشی شہری مل کر ایسی چیز چراتے رنگے ہاتھوں پکڑے ...
شارجہ میں پاکستانی اور بنگلہ دیشی شہری مل کر ایسی چیز چراتے رنگے ہاتھوں پکڑے گئے کہ جان کر آپ کو بھی شرم آجائے گی

  

شارجہ(مانیٹرنگ ڈیسک)بیرون ملک جانے والے اپنے وطن کے سفیر ہوتے ہیں کہ ان کے ہر عمل سے ان کے وطن کا نام وابستہ ہوتا ہے۔ اگرچہ باہر جانے والے پاکستانیوں کی بڑی تعداد کو اس بات کا شدت سے احساس رہتا ہے، لیکن افسوس کہ کچھ بدبخت ایسے بھی ہیں جو اپنی غلط کاریوں سے اپنی عزت تو گنواتے ہی ہیں، ساتھ ملک کے لئے بھی برا نام کماتے ہیں۔ متحدہ عرب امارات میں زیر تعمیر عمارتوں سے تانبے کے تار چوری کرنے والے بنگلا دیشی اور پاکستانی چور بھی ایسی ہی شرمناک مثال ہیں۔

’مجھے اغواءکرکے اس گھر میں رکھا گیا ہے‘ شارجہ پولیس کو غیر ملکی لڑکی کی فون کال، پولیس جب گھر میں داخل ہوئی تو اندر ایسا منظر کہ ہر کسی کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں، درجنوں لڑکیاں اور وہ بھی کس کام کیلئے؟ جواب کوئی سوچ بھی نہیں سکتا

خلیج ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق پاکستانی اور بنگلہ دیشی شہریوں پر مشتمل یہ گینگ زیر تعمیر عمارتوں سے تانبے کے تار چراتا تھا اور پھر یہ تاریں سکریپ کمپنیوں کو فروخت کر دیتا تھا۔ متعدد زیر تعمیر عمارتوں کے مالکان اور ٹھیکیداران کی جانب سے کالبہ پولیس سٹیشن میں شکایات درج کروائی جاچکی تھیں۔ ان شکایات کی بناءپر پولیس نے ایک خصوصی ٹیم تشکیل دی جس نے تین ایشیائی باشندوں کو گرفتار کیا۔ تفتیش کے دوران ملزمان نے بتایا کہ وہ ایک عرصے سے زیر تعمیر عمارتوں سے تانبے کے تار چرا کر سکریپ کمپنیوں کو فروخت کر رہے تھے۔ ان واقعات کے پیش نظر پولیس کی جانب سے زیر تعمیر عمارتوں کے مالکان اور ذمہ داران کو خبر دار کیا گیا ہے کہ اپنی زیر تعمیر عمارتوں کی حفاظت کیلئے گارڈ تعینات کریں۔

مزید :

عرب دنیا -