ہائی کورٹ نے الیکشن ٹربیونل کے ججوں کی تنخواہیں اور مراعات سیشن ججوں کے برابر کرنے کا حکم دے دیا

ہائی کورٹ نے الیکشن ٹربیونل کے ججوں کی تنخواہیں اور مراعات سیشن ججوں کے ...
ہائی کورٹ نے الیکشن ٹربیونل کے ججوں کی تنخواہیں اور مراعات سیشن ججوں کے برابر کرنے کا حکم دے دیا

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے الیکشن ٹربیونل کے ججوں کی تنخواہیں اور مراعات سیشن ججوں کے برابر کرنے کا حکم دے دیا ۔چیف جسٹس سید منصور علی شاہ نے یہ حکم الیکشن ٹربیونل کے ریٹائرڈ جج جاوید رشید محبوبی کی درخواست پر جاری کیاہے، چیف جسٹس کی جانب سے جاری فیصلے میں ٹربیونل کے ریٹائرڈ ججز کو تمام الاﺅنسز کے بقایا جات بھی ادا کرنے کا حکم دیا گیا ہے، فیصلے میں کہا گیا ہے کہ حاضر سروس اور الیکشن ٹربیونل میں تعینات کئے جانے والے ریٹائرڈ سیشن جج کی تنخواہ میں فرق نہیں ہو سکتا، فیصلے کے مطابق یکساں کام پر یکساں تنخواہ اور مراعات کا اصول لاگو ہوگا، عدالتی معاون حافظ طارق نسیم نے ریٹائرڈ ججز کے حق میں دلائل دیتے ہوئے کہا کہ الیکشن ٹربیونل کے ججوںکی تعیناتیوں میں امتیازی سلوک نہیں ہونا چاہیے ۔ الیکشن ٹربیونل کے ریٹائرڈ ججزنے الاﺅنسز کی عدم ادائیگی کو لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کرتے ہوئے موقف اختیار کررکھا تھا کہ ریٹائرڈ سیشن ججوں کو بطور الیکشن ٹربیونل تعینات کیا جاتا ہے، بطور جج انتخابی عذرداریوں پر فیصلے کرتے ہیں، کام کی نوعیت یکساں ہونے کے باوجود تنخواہ اور دیگر مراعات سیشن جج کے برابر نہیں دی جاتیں، عدالت سیشن جج کے برابر مراعات دینے کا حکم دے۔

مزید :

لاہور -